پنجاب بھر میں قبضہ مافیا کیخلاف آپریشن کیلئے انسداد تجاوزات کمیٹیاں تشکیل

پنجاب بھر میں قبضہ مافیا کیخلاف آپریشن کیلئے انسداد تجاوزات کمیٹیاں تشکیل

  



لاہور(جنرل رپورٹر) وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار کی ہدایات پر قبضہ مافیا اور تجاوزات کے خلاف جاری آپریشن کی نگرانی کیلئے ہر ضلع میں انسداد تجاوزات کمیٹیاں تشکیل دے دی گئی ہیں۔ انسداد تجاوزات کمیٹیوں کا سربراہ ضلع کے ڈپٹی کمشنر کو مقرر کیا گیا ہے جبکہ متعلقہ ضلع کا ڈی پی او/ سی پی او، لوکل گورنمنٹ کا ضلعی افسر اور ڈویلپمنٹ اتھارٹیز کے سینئر افسر ان کمیٹیوں کے ممبرز ہوں گے۔ضلع کے اراکین قومی و صوبائی اسمبلی، سول سوسائٹی کے ممبران اور معززین علاقہ بھی کمیٹیوں میں شامل ہوں گے۔انسداد تجاوزات کمیٹیاں روزانہ کی بنیاد پر قبضہ مافیا اور تجاوزات کے خلاف آپریشن کی منصوبہ بندی اور نگرانی کی ذمہ دار ہوں گی۔ وزیراعلیٰ نے اس ضمن میں مزید ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ با اثر اور طاقتور مافیا سے سرکاری اراضی پر قبضہ ہر صورت چھڑایا جائے گا اورسرکاری اراضی پر غیر قانونی طور پر قابضین کے خلاف بلاامتیاز آپریشن جاری رہے گا۔غریب لوگوں، ریڑھی بانوں، چھابڑی فروشوں کے خلاف اور کچی آبادیوں میں آپریشن نہیں کیا جائے گا اور اگر اس ضمن میں کوئی شکایت ملی تو متعلقہ حکام کے خلاف ایکشن لیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ ایل ڈی اے، آر ڈی اے، ایف ڈی اے، ایم ڈی اے، جی ڈی اے اور دیگر اتھارٹیز کے زیر انتظام علاقوں میں ناجائز قابضین کے خلاف آپریشن بلارو رعایت جاری رہے گا اور کسی کو سرکاری زمین پر قبضہ کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔دوسری طرف سردار عثمان بزدار کی زیرصدارت اعلیٰ سطح کا اجلاس منعقد ہوا، وفاقی وزیر بجلی عمر ایوب خان نے بھی اجلاس میں شرکت کی ۔اجلاس میں وزیراعظم کے بجلی چوری روکنے کی مہم کے حوالے سے صوبہ پنجاب کے آئندہ کے لائحہ عمل کا تفصیلی جائزہ لیا گیا ۔اجلاس میں پنجاب میں بجلی چوری روکنے کے لئے وزیراعلیٰ ٹاسک فورس تشکیل دینے کا فیصلہ کیاگیا ۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ پہلے مرحلے میں انڈسٹریل ، کمرشل اور زیادہ بجلی استعمال کرنے والے گھریلو صارفین کے خلاف ایکشن لیا جائے گا۔صوبائی سطح پر ٹاسک فورس کی سربراہی سیکرٹری سطح کے افسر کریں گے جبکہ ڈویژن اور ضلع کی سطح پر خصوصی کمیٹیاں تشکیل دی جائیں گی۔ ڈویژنل کمیٹی کی سربراہی کمشنر جبکہ ڈسٹرکٹ کمیٹی کی سربراہی ڈپٹی کمشنر کریں گے ۔خصوصی کمیٹیوں میں ڈویژنل اور ضلعی سطح کے پولیس افسران بھی شامل ہوں گے۔وزیراعلیٰ ٹاسک فورس کو وفاقی حکومت اور متعلقہ وفاقی اداروں کی پوری معاونت حاصل ہوگی۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے اجلا س سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ بجلی چوری روکنے کے لئے بلاامتیاز آپریشن ہوگا اور بجلی چوری کے خلاف مہم کے دوران بڑے مگر مچھوں پر پہلے ہاتھ ڈالا جائے گا۔انہوں نے کہاکہ بجلی چوری میں معاونت کرنے والے سرکاری عملے کے خلاف بھی کارروائی ہوگی اور مہم کے دوران سیاسی وابستگی یا دباؤ کوخاطر میں نہیں لایا جائے گا۔چیف سیکرٹری، وفاقی سیکرٹری بجلی، ایڈیشنل انسپکٹر جنرل، ایڈیشنل چیف سیکرٹری توانائی، چیف ایگزیکٹو آفیسر لیسکو اور متعلقہ محکموں کے سیکرٹریز نے اجلاس میں شرکت کی۔ دریں اثناؤزیراعلیٰ سردار عثمان بزدار سے بلوچستان کے وزیر جنگلات میر ضیاء اللہ نے ملاقات کی ،جس میں باہمی دلچسپی کے امور اور بین الصوبائی ہم آہنگی بڑھانے پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

مزید : صفحہ اول