مسلم ریاستوں سمیت دنیابھر میں حقوق انسانی کی پامالی معمول بن گئی، حامدموسوی

مسلم ریاستوں سمیت دنیابھر میں حقوق انسانی کی پامالی معمول بن گئی، حامدموسوی

  



اسلام آباد(سٹاف رپورٹر)سپریم شیعہ علماء بورڈ کے سرپرست اعلی و تحریک نفاذ فقہ جعفریہ کے سربراہ آغا سید حامد علی شاہ موسوی نے کہاہے کہ مسلم ریاستوں سمیت دنیابھر میں حقوق انسانی کی پامالی معمول بن چکاہے،مقبوضہ کشمیروفلسطین ہنودویہودکے غیرانسانی مظالم کاشکارہیں، حقوق بشرکے نام نہادادارے خاطرخواہ توجہ نہیں دے رہے ،جب سے ٹرمپ نے بیت المقدس کواسرائیلی دارلحکومت تسلیم کیاہے نہتے فلسطینیوں پرسختیوں میں مزیداضافہ اور انہیں زندہ رہنے کے حق سے محروم کیاجارہاہے،عالمی ادارے جرائم کے مرتکب اسرائیلی وبھارتی سامراجیوں کیخلاف عالمی جنگی جرائم کے ٹریبونل میں مقدمات درج کریں، یمن ،شام ، عراق ، لیبیا، بحرین میں مسلمان مسلمان کاخون بہارہے ہیں ، ذاتی مفادات ،حکمرانی کے بچاؤکیلئے استعماری خوشنودی کاحصول مقصداولین بن چکاہے، نئے امریکی پیغامات کامقصد افغانستان میں شکست کاملبہ پاکستان پرڈالناہے لہذامسلم حکمران ایکدوسرے کے ممالک میں بلاجوازمداخلت بندکریں،اتحادویکجہتی کامظاہرہ کریں اور کسی دھوکے میں مت آئیں کیونکہ آزمائے ہوئے کوآزماناجہالت ہے لہذاایسی خارجہ پالیسی بنائی جائے کہ سانپ بھی مرجائے اورلاٹھی بھی بچ جائے ۔ ان خیالات کااظہارانہوں نے ٹی این ایف جے کوہاٹ ریجن کے ناظم الامورسیدغضنفرعلی شاہ ایڈووکیٹ کی سرکردگی میں عمائدین کے وفدسے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔آقای موسوی نے باورکرایاکہ اوآئی سی اورعرب لیگ کوسانپ سونگھ گیاہے ، کاش یہ ادارے مسلم ممالک کے مسائل کے حل کیلئے ویٹوکاحق حاصل کرتے توابلیسی قوتوں کومسلم حکمرانوں کواستعمال کرنے اورہمارے ممالک میں مداخلت کی جرات نہ ہوتی ۔آغاسیدحامدعلی شاہ موسوی نے یہ بات زوردیکرکہی کہ اسوقت پاکستان تمام شیطانی قوتوں کی آنکھوں میں بری طرح کھٹک رہاہے ، ابلیسی اعظم نے وطن عزیزکوجونقصانات پہنچائے اوردھوکے فراڈکیے وہ ڈھکے چھپے نہیں ۔ قائدملت جعفریہ آغاسیدحامدعلی شاہ موسوی نے باوکرایاکہ استعماری سرغنے کی جانب سے ماضی کوفراموش کرکے آگے بڑھنے کاپیغام محض ڈرامہ ہے ، ہم گزشتہ پون صدی سے جانوں کے نذرانے پیش کرنے والے شہداء کوفراموش نہیں کرسکتے ،وطن عزیزکوجونقصانات برداشت کرنے پڑے اورجس عالمی سرغنہ کی وجہ سے ہم نے دنیاکواپنادشمن بنایاوہ ہمارے نقصانات کی تلافی توکیاکرتاتاہنوزڈومورکے مطالبات کرتارہتاہے اوراسوقت بھی بھارت کوپاکستان پرترجیح دیتاہے ۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر