آئی ایس آئی کے سربراہ لیفٹیننٹ جنرل عاصم منیر دراصل کون ہیں؟ وہ باتیں جو آپ کو معلوم نہیں

آئی ایس آئی کے سربراہ لیفٹیننٹ جنرل عاصم منیر دراصل کون ہیں؟ وہ باتیں جو آپ ...
آئی ایس آئی کے سربراہ لیفٹیننٹ جنرل عاصم منیر دراصل کون ہیں؟ وہ باتیں جو آپ کو معلوم نہیں

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )پاک فوج میں بڑے پیمانے پر تقررو تبادلے عمل میں لائے گئے ہیں اور جنرل عاصم منیر کو ڈی جی آئی ایس آئی تعینات کر دیا گیا ہے جو کہ خفیہ ایجنسی کے موجودہ سربراہ نوید مختار کے 25 اکتوبر کو ریٹائر ہونے کے بعد عہدہ سنبھالیں گے ۔

تفصیلات کے مطابق جنرل عاصم منیر کا تعلق انفنٹری رجمنٹ سے ہے ،اس سے قبل وہ وہ ڈائریکٹر جنرل ملٹری انٹیلی جنس (ایم آئی) کے فرائض انجام دیتے رہے ہیں اور اس سے پہلے انہوں نے سیاچن میں ڈویژن کمانڈ کی ہے۔ وہ آپریشنل ایریا میں بریگیڈ کی کمان سنبھال چکے ہیں۔عاصم منیر پاکستان ملٹری اکیڈمی یعنی پی ایم اے کے فارغ التحصیل نہیں بلکہ انھوں نے آفیسرز ٹریننگ سکول سے فوج میں کمیشن حاصل کیا تھا۔

لیفٹیننٹ جنرل ندیم ذکی منج کو کور کمانڈر منگلا تعینات کر دیا گیا ہے ، پی ایم اے کے 75ویں لانگ کورس کے لیفٹیننٹ جنرل ندیم زکی منج کا تعلق فوج کی آرمرڈ کور سے ہے، وہ سابق آرمی چیف جنرل راحیل شریف کے دور میں ملٹری انٹیلی ایجنس کے سربراہ رہے ہیں۔ انھوں نے بلوچستان میں ایک ڈویژن، جبکہ آپریشنل علاقوں میں بریگیڈ کمانڈ کی ہے۔

جنرل وسیم اشرف کو آئی جی آرمز تعینات کر دیا گیاہے ان کا تعلق بھی انفنٹری رجمنٹ سے ہے لیفٹیننٹ جنرل وسیم اشرف آئی جی ایف سی خیبر پختونخوا کے عہدے پر تعینات تھے اس کے علاوہ وسیم اشرف آئی ایس آئی میں بھی تعینات رہے ہیں۔ وہ 76ویں لونگ کورس سے پاس آو¿ٹ ہوئے اور ان کا تعلق فرنٹیئر فورس رجمنٹ سے ہے۔ ان کے بھائی لیفٹیننٹ جنرل نعیم اشرف اس وقت کور کمانڈر ملتان تعینات ہیں ۔

مزید : قومی