طلاق سے بچنے کے لئے ایسی روحانی تسبیح کہ گھر تباہ ہونے سے بچ جائے گا

طلاق سے بچنے کے لئے ایسی روحانی تسبیح کہ گھر تباہ ہونے سے بچ جائے گا
طلاق سے بچنے کے لئے ایسی روحانی تسبیح کہ گھر تباہ ہونے سے بچ جائے گا

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لاہور (نظام الدولہ )مجھے روزانہ ایسی درجنوں ای میلز آتی ہے کہ لوگ اپنی نجی ازدواجی زندگی کو بچانے کے لئے تسبیحات مانگتے ہیں ۔ان کا گھر کسی ایک فریق کی غلطی ضد اور بسااوقات کئی دیگر معاملات کی وجہ سے طلاق سے تباہ ہونے کے قریب پہنچ جاتا ہے ۔

موجود دور میں ہمارے سماج میں طلاق کا مرض بری طرح پھیل گیا ہے ۔ایک دور تھا جب کوئی ایسا مسئلہ پیدا ہوجاتا تھا تو فریق اس میں طلاق کے لئے جلد بازی نہیں کرتے تھے مگر اب تو بہت سے کیسز میں دیکھا ہے کہ ان کے لئے طلاق لینا کوئی مشکل کام نہیں رہا ۔ذرا سا مسئلہ بنا تو عجلت و جذباتیت میں طلا ق و خلع کی ڈیمانڈ کردی جاتی ہے ۔اس کا ایک مطلب یہ لیا جاتا ہے کہ فریقین میں قوت برداشت کم ہوتی جارہی ہے ۔انہیں یہ احساس ہی نہیں رہتا کہ پہلے کن مشکلوں سے انکی شایدیاں ہوئی ہوتی ہیں اور اب طلاق کے بعد جب ان کا گھر ٹوٹ جائے گا تو بچوں پر کیا برے اثرات ہوں گے ۔دلوں میں محبت اور دماغ میں قوت برداشت قائم رہنے سے انسان مشکل ترین حالات سے گذر جاتا ہے اور طلاق نہیں ہوتی۔اس میں روحانی علاج کرنا بہترین عمل ہوتا ہے کہ دعا سے اللہ ایسے حالات پیدا فرماتے ہیں کہ انسان میں قوت برداشت بھی پیدا ہوجاتی اور طلاق کا موجب بننے والی غلطیاں بھی دور ہوجاتی ہیں ۔ انسان اللہ کی رحمت کا طلب گار ہوتو اسے اپنے رب سے ہمیشہ شکر اور استغفار کرتے رہنا چاہئے۔ایسے تمام لوگ جن کے گھر طلاق اور خلع سے ٹوٹنے کا خدشہ ہو،وہ روزانہ تین سو تیرہ بار استغفر اللہ نماز عشاء کے بعد پڑھا کریں ۔گیارہ سو بار’’ یاودود یاباقی ‘‘ دل میں گیارہ سو بار پڑھ کر دعا کیا کریں ۔کسی غریب و مستحق کو صدقہ خیرات حسب توفیق دیتے رہا کریں۔(اپنے مسائل کے حل کے لئے اسما الحسنٰی کی روحانی تسبیح حاصل کرنے کے لئے اس ای میل پر ،اپنا پورا نام ،کاروبار،شہر اور مسئلہ لکھ کر بھیجیں systemtoday14@yahoo.com )

مزید : روشن کرنیں