”میری دوست اور اس کا شوہر ساحل پر ٹہلنے گئے تو انہیں پولیس نے پکڑ لیا اور کہنے لگے ۔۔“ اینکر رابعہ انعم نے ٹویٹر پر ایسا واقعہ سنا دیا کہ جان کر آپ کیلئے بھی ہنسی روکنا ناممکن ہو جائے گا

”میری دوست اور اس کا شوہر ساحل پر ٹہلنے گئے تو انہیں پولیس نے پکڑ لیا اور ...
”میری دوست اور اس کا شوہر ساحل پر ٹہلنے گئے تو انہیں پولیس نے پکڑ لیا اور کہنے لگے ۔۔“ اینکر رابعہ انعم نے ٹویٹر پر ایسا واقعہ سنا دیا کہ جان کر آپ کیلئے بھی ہنسی روکنا ناممکن ہو جائے گا

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن ) کراچی میں ساحل پر ٹہلنے جانے والے جوڑوں سے پولیس اہلکار اکثر اوقات نکاح نامہ طلب کرتے ہوئے نظر آتے تھے تاہم اب یہ ممکن نہیں کہ میاں بیوی ہر وقت نکاح نامہ جیب میں ڈال کر گھومیں اور اسی بات کے پیش نظر کراچی پولیس چیف نے ایکشن لیتے ہوئے جوڑوں سے نکاح نامہ طلب کرنے والے اہلکاروں کیخلاف کارروائی کا حکم جاری کر دیاہے ۔

تفصیلات کے مطابق دوسری جانب یہ امر دلچسپی سے بھر پور ہے کہ نجی ٹی وی جیونیوز کی اینکر رابعہ انعم نے ٹویٹر پر انتہائی مضحکہ خیز ٹویٹ کیاہے ۔ رابعہ انعم نے پولیس چیف کے اس نوٹس اور حکم کی خبر کو ری ٹویٹ کرتے ہوئے لکھا کہ ” آخر کار ! میری دوست اور اس کا شوہر جس وقت ساحل کی سیر کیلئے گئے تو انہیں پولیس اہلکاروں نے روک لیا اور ان سے میاں بیوی ہونے کا ثبوت طلب کیا اور انہیں اس وقت ساحل پر جانے دیا گیا جب انہوں نے اپنی شادی کی تصاویر بطور ثبوت پولیس اہلکار کو دکھائیں ، جو کہ انتہائی حیران کن ہے ۔“

یاد رہے کہ کراچی پولیس چیف ڈاکٹر امیر شیخ نے شہر میں جوڑوں سے نکاح نامنے مانگنے والے پولیس اہلکاروں کے خلاف سخت کارروائی کا حکم جاری کر دیاہے ، پولیس چیف کی جانب سے کراچی کے تینوں زونز کے ڈی آئی جیز کو لکھے گئے خط میں ایسے اہلکاروں کے خلاف فوری کاروائی کی ہدایت کی گئی ہے۔پولیس چیف کی جانب سے لکھے گئے خط کے مطابق عام شکایت ہے کہ پولیس موبائل یا موٹر سائیکل پر گشت کرنے والے مخصوص پولیس اہلکار جوڑوں سے نکاح نامے طلب کرکے خوفزدہ کرتے ہیں۔

ڈاکٹر امیر شیخ نے اپنے خط میں تنبیہ کی کہ فیملیز خاص طور پر جوڑوں سے میاں بیوی ہونے کا ثبوت مانگنے کی شکایت نہیں ملنی چاہیے۔ پولیس چیف نے مزید کہا کہ ساحل سمندر، کلفٹن اور دیگر تفریحی مقامات پر پولیس اہلکاروں نے بلاوجہ شہریوں کو تنگ کیا تو سخت کارروائی کی جائے گی۔

مزید : ڈیلی بائیٹس