کوسٹ گارڈز کی کارروائی،کروڑوں روپے مالیت کی ہیروئن برآمد

کوسٹ گارڈز کی کارروائی،کروڑوں روپے مالیت کی ہیروئن برآمد

کراچی(کرائم رپورٹر)پاکستان کوسٹ گارڈزنے خفیہ اطلاع پرمختلف کارروائیاں کرکے کروڑوں روپے مالیت کی ہیروئن،ہتھیاراورایرانی ڈیزل برآمدکرلیئے ہیں۔ترجمان پاکستان کوسٹ گارڈزکے مطابق پاکستان کوسٹ گارڈزکوخفیہ ذرائع سے اطلاع ملی تھی کہ پسنی(بلوچستان) کے ساحلی علاقے سے بھاری مقدار میں منشیات اسمگل ہونے کا خدشہ ہے۔جس کو مدِنظر رکھتے ہوئے ڈائریکٹر جنرل پاکستان کوسٹ گارڈزبریگیڈیئر سجاد سکندر رانجھا ستارہ امیتازملڑی نے متعلقہ کمانڈر کو اپنے علاقے میں چیکنگ مزیدسخت کرنے کے احکامات جاری کیے۔ پاکستان کوسٹ گارڈز نے پسنی کے ساحل سے تقریبا8نائیٹکل میل دورکھلے سمندر میں موجودسپیڈ بوٹس کی چیکنگ کے دوران تقریبا50کلو گرام اعلی کوالٹی کی ہیروئن برآمدکر لی۔خدشہ ہے کہ یہ منشیات پاکستان سے مشرق وسطی اسمگل کی جا رہی تھی، منشیات اورکشتی کوپاکستان کوسٹ گارڈز نے اپنی تحویل میں لے لیا۔ایک اور کاروائی کے دوران نیلینٹ چیک پوسٹ(گوادر)پر کار کی سیٹوں کے نیچے چھپائے گئے۔5عدد 9ایم ایم، 2عدد 30بور پسٹل اور 290روند برآمد کر کے3افراد کو حراست میں لے لیاہے۔جبکہ وندر میں کارروائی کرتے ہوئے غیرقانونی طریقے سے چھپایا گیا16ہزارلیٹر ایرانی ڈیزل برآمدکر لیاہے۔پکڑی جانے والی منشیات، ڈیزل اور سپیڈ بوٹ کی مالیت عالمی مارکیٹ میں تقریبا 2964.3ملین روپے لگ بھگ ہے۔ گرفتار شدہ3 اسمگلر زکے خلاف ایف آئی آردرج کرکے مزید تفتیش جاری ہے۔پاکستان کوسٹ گارڈز اس امر کا اعادہ کرتی ہے کہ مستقبل میں بھی اس طرح کی کاروائیاں تسلسل کے ساتھ جاری رہیں گی تا کہ وطنِ عزیز کو اس لعنت سے نجات دلائی جا سکے اور اس مقصد کے حصول کے لئے تمام دستیاب وسائل کو بھرپور طریقے سے بروئے کار لایا جائے گا۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...