مڈوائفری ایسوسی ایشن کا زچہ و بچہ کی دیکھ بھال پر اجلاس

    مڈوائفری ایسوسی ایشن کا زچہ و بچہ کی دیکھ بھال پر اجلاس

کراچی(پ ر) مڈ وائفری ایسوسی ایشن آف پاکستان (ایم اے پی) نے یونائٹیڈ نیشنز پاپولیشن فنڈ(یو این ایف پی اے)، پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن (ایم پی اے) اور پاکستان نیشنل فورم آن ویمنز ہیلتھ کے تعاون سے، 09 اور 10 اکتوبر،2019ء کو، کراچی میں،پہلی دوروزہ ریجنل مڈوائفری سمٹ منعقد کی۔اجلاس شروع ہونے سے پہلے مڈوائفری ایسوسی آف پاکستان نے کراچی میں مڈوائفری کی تعلیم دینے والے اسکولوں اور اسپتالوں میں مڈ وائف کا کام کرنے والی خواتین کے لیے 14 ورکشاپس بھی منعقد کیے۔گرین اسٹار سوشل مارکیٹنگ نے بھی معلومات پر مبنی اس اجلاس میں شرکت کی۔اس سال منعقدہونے والے مڈوائفری اجلاس کا موضوع ”مڈوائف – دی ڈیفنڈرز آف ویمنز رائٹس (Midwives - The Defenders of Womens Rights)“ تھا۔اجلاس میں کشمیر، گلگت-بلتستان اور ہنزہ سمیت، پورے ملک سے 600 سے زائدمڈوائیوزنے شرکت کی جب کہ انڈونیشیا، آئر لینڈ، ترکی، بحرین، آسٹریلیا، تھائی لینڈ اور برطانیہ کے علاوہ سارک ممالک سے تعلق رکھنے والے قابل اسپیکرز اور پریکٹشنرز نے بھی شرکت کی اور حاضرین کو اپنے تجربات میں شریک کیا۔مؤرخہ 09 اکتوبر کی شام کو منعقدہ اختتامی تقریب کی صدارت سندھ کی وزیر صحت ڈاکٹر شہلا پیچوہو نے کی۔ انھوں نے اپنے خطاب میں کہا:”مڈوائفری ایک مشکل پروفیشن ہے جس میں خواتین کی صحت کے معاملات سے نمٹنا پڑتا ہے۔لہذا پاکستان کے مختلف حصوں سے تعلق رکھنے والی مڈوائیوز کو مختلف پلیٹ فارمز، فورمز اور میڈیاکے ذریعے لازماً ایک دوسرے کے ساتھ رابطے میں رہنا چاہیے تاکہ ماؤں کی صحت کے حوالے سے درپیش چیلنجوں اور مواقع میں کمیونٹی کو شامل رکھا جا سکے۔“افتتاحی سیشن سے یونائٹیڈ نیشنز پاپولیشن فنڈ کی نمائندہ برائے پاکستان، لینا موسیٰ نے آئرلینڈ کی شیلا سوگورو کے ہمراہ خطاب کیااور جدید دنیا میں مڈوائفری کے طریقوں کے بارے میں حاضرین کو اپ ڈیٹ کیا۔اجلاس سے خطاب کرنے والے دیگر اہم مقررین میں نیشنل سینٹر فار مینٹل ہیلتھ(این سی ایم ایچ) کی ممتاز گائناکولوجسٹ پروفیسر صادقہ جعفری، مڈوائفری ایسوسی ایشن آف پاکستان کی صدر عروسہ لاکھانی، پاکستان نرسنگ کونسل کی صدر اور کونسل ہی کی ڈائریکٹر آف نرسنگ شامل تھیں۔مورخہ 10اکتوبر، 2019کو منعقدہ سائنٹفک سیشن، صبح سے شام تک، میریٹ ہوٹل، کراچی، کے چھ ہالز میں جاری رہا جس میں مڈوائفری کی تعلیم دینے والے قومی اور بین الاقوامی اداروں کے ماہرین نے اس پروفیشن میں مڈوائیوز کے مختلف کرداروں کے بارے میں بات کی۔ اجلاس کے دوران جن موضوعات پر بات کی گئی ان میں خاندانی منصوبہ بندی اور تولیدی صحت، مڈوائیوز اور زچگی کے دوران اموات، زچہ و بچہ کی بیماریاں، کمیونٹی میں مڈوائیوز کا کردار اور حاملہ عورتوں کی گھریلو دیکھ بھال شامل تھے۔دیگر اہم موضوعات میں مڈوائفری کے طریقوں کے بارے میں تحقیق، گھریلو تشدد، فسٹیولا سے بچاؤ، قبل از وقت پیدا ہونے والے بچوں کی کینگرو کیئر، پین منیجمنٹ میں جدت، زچہ وارڈز، وقار کے ساتھ حاملہ عورتوں کی دیکھ بھال، زچگی کے دوران ہنگامی صورتحال، آبادی وغیرہ شامل تھے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...