سرکاری ہسپتالوں سے سینئر ڈاکٹرز غائب‘ پرائیویٹ کلینکوں پر ڈبل فیس

  سرکاری ہسپتالوں سے سینئر ڈاکٹرز غائب‘ پرائیویٹ کلینکوں پر ڈبل فیس

  

 ملتان (وقا ئع نگار) نشتر میڈیکل یونیورسٹی انتظامیہ نے محکمہ صحت پنجاب گورنمنٹ کے ہسپتال کے اندر پروفیسرز اور ڈاکٹرز کی پرایؤیٹ پریکٹس بارے واضع احکامات کو ہوا میں اڑا دیا۔ذرائع کے مطابق نومبر 2018 میں محکمہ صحت پنجاب گورنمنٹ نے تمام ٹیچنگ سرکاری ہسپتالوں میں مناسب فیس پر پروفیسرز اور سینئر ڈاکٹرز کو مریضوں کو چیک کرنے کیلئے تین بجے سے شام  سات بجے تک پرایؤیٹ پریکٹس(بقیہ نمبر42صفحہ12پر)

 کرنے کے احکامات کئے تھے جس پر نشتر میڈیکل یونیورسٹی میں تمام ڈیپا رٹمنٹس کے ایچ او ڈیز کو سرکلر جاری کیا گیا۔مگرشعبہ سرجری کے ڈاکٹرز بھی احکامات کی خلاف ورزی کرنے میں سر فہرست ہیں۔شہر کے تمام وی آئی پی  نجی ہسپتالوں میں نشتر کے سینئر ڈاکٹرز مہنگی فیسیں لیکر پرایؤیٹ مریضوں کی کھال اتار کر علاوہ گورنمنٹ تنخواہ کے لاکھوں روپے کما رہے ہیں اور سرکاری ہسپتال پرایؤیٹ پریکٹس سے مناسب فیس پر ویران پڑے ہیں۔اس سلسلے میں محکمہ صحت پنجاب گورنمنٹ نے بھی چپ سادھ رکھی ہے۔عوامی حلقوں اور عام شہریوں نے حکام بالا سیسرکاری ہسپتالوں میں مناسب فیس کے ساتھ پرایؤیٹ پریکٹس کو جاری کرانے کا مطالبہ کیا ہے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -