بھٹہ کالونی ڈیرہ‘ 14 ماہ سے سوئی گیس بند‘ اہل علاقہ کا احتجاج‘ ٹریفک جام

بھٹہ کالونی ڈیرہ‘ 14 ماہ سے سوئی گیس بند‘ اہل علاقہ کا احتجاج‘ ٹریفک جام

  

ڈیرہ غازیخان(نمائندہ خصوصی) 14 ماہ سے سوئی گیس کی مسلسل بندش کے خلاف بھٹہ کالونی میں مرد و خواتین نے رکاوٹیں کھڑی کر کے اور ٹائر جلا کرمین صوبائی شاہراہ کوئٹہ روڈ ہر قُم کی ٹریفک کے لیئے بند کردی 4 گھنٹے مسلسل بندش کے باعث ٹرکوں اور دیگر گاڑیوں کی لمبی لائنیں،ایمبولینسز بھی ٹریفک میں پھنس گیئں تفصیل کے مطابق یونین کونسل 15 کی آبادی بھٹہ کالونی میں گزشتہ ایک سال سیسوئی گیس کی بندش پر علاقہ مکینوں جس میں دو درجن سے زائد خواتین بھی موجود تھیں نے احتجاجارکاوٹیں کھڑی کرکے اور (بقیہ نمبر45صفحہ12پر)

ٹائر جلا کرکوئٹہ روڈ کو ہر قسم کی ٹریفک کے لیئے بند کردیا مظاہرین کے مطابق سوئی گیس کی بندش کے باوجود ایک سال سے ہر ماہ ہزاروں روپے کے بل بھیج دیئے جاتے ہیں اور عدم ادائیگی پر سوئی گیس عملہ میٹر اتار لیتے ہیں اور مقدمات کے اندراج کی دھمکیاں دی جاتی ہیں احتجاجی مظاہرین عبدالعزیز،محمد ندیم،فدا حسین،نور محمد،محمد عمران،محمد جاوید،خیرمحمد،یاسر شاہ، محمد فیاض،طارق حنیف،ریاض حسین، غلام مرتضی،اعجازلغاری،فیض محمد، جاوید اختر،محمد شاہد، محمد ارشد،عبدالرشید وغیرہ نے کہا کہ سوئی ناردرن گیس عملہ نے آج سے 14 ماہ قبل مین گیس پائپ لائن سے اس آبادی کا کنیکشن منقطع کردیا تھا اور آج تک بحال نہیں کیا گیا جو محکمہ کے ریکارڈ پر آج بھی موجود ہے اس موقع پر موجود خواتین نے بتایا کہ اس آبادی کے چاروں طرف سوئی گیس موجود ہے اگر ہم کسی سے سوئی گیس لیں تو عملہ والے اس کا میٹر بھی اتار لیتے ہیں خواتین کے مطابق ایک سال سے سوئی گیس کی بندش سے امور خان داری میں شدید دشواری کا سامنا ہے ملازم پیشہ افراد اور سکول و کالج جانے والے طلبا کو بھوکے پیٹ جانا پڑتا ہے احتجاجی خواتین نے کہا کہ اربن آبادی ہونے کے باوجود ہم آج بھی مہنگی ترین لکڑیاں جلانے پر مجبور ہیں انہوں نے الزام عائد کیا کہ سوئی ناردرن گیس عملہ نے شکست خوردہ سیاسی رہنماؤں کے ایما پر اس آبادی کا کنیکشن منقطع کیا ہے اس موقع پر احتجاج ختم کرانے بارے گدائی پولیس اور مظاہرین کے درمیان ہونے والے مذاکرات بھی نا کام رہے اس موقع پر سوئی ناردرن گیس افسران کے آنے پر مظاہرین نے ان کے خلاف شدید نعرے بازی کی افسران کی جانب سے 24 گھنٹے میں سوئی گیس بحالی کی یقین دہانی مظاہرین پر امن طور پر منتشرہوگئے۔

احتجاج‘ گیسَ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -