صدر شی بھارت کے دورے سے ہمیں باخبر رکھیں: وزیر خارجہ 

    صدر شی بھارت کے دورے سے ہمیں باخبر رکھیں: وزیر خارجہ 

  

بیجنگ (این این آئی)وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ پاکستان اور چین ہر موڑ پر ایک دوسرے کو اعتماد میں لیتے ہیں، وزیر اعظم کا دورہ مکمل ہونے کے بعد بھی ہمار ا رابطہ ہوگا اور وہ ہمیں باخبر رکھیں گے،پانی کے مسئلے پر پر ایک ڈی سیلینیشن پلانٹ لگانے کا فیصلہ کیا گیا ہے،گوادر بھی اس سے مستفید ہو گا۔ بدھ کو وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے بیجنگ میں وزیر اعظم عمران خان کے دورہ چین کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ 16 اگست کو ہم مشترکہ حکمت عملی سے آگے بڑھے تھے۔ انہوں نے کہاکہ جنیوا میں جب ہیومن رائٹس کونسل کا اجلاس ہوا تو اس میں بھی ہماری مشترکہ حکمت عملی تھی۔ انہوں نے کہاکہ حال ہی میں اقوام متحدہ جنرل اسمبلی میں جہاں پاکستان نے مقبوضہ جموں و کشمیر کے حوالے سے اپنا نقطہ نظر پیش کیا وہاں چین کے اسٹیٹ قونصلر اور وزیر خارجہ وانگ ژی نے کشمیر کے حوالے سے بات کی اور تشویش کا اظہار کیا۔ انہوں نے کہاکہ چین کی بہت واضح پوزیشن ہے انہوں نے ہماری تاریخی پوزیشن کو اپنایا ہوا ہے۔ انہوں نے کہاکہ آپ کے علم میں ہو گا کہ صدر شی ایک مختصر غیر رسمی دورے پر بھارت جا رہے ہیں چنانچہ ان کی بھی خواہش تھی اور ہماری بھی تھی کہ اس حوالے سے ہم ایک دوسرے کو اعتماد میں لیں اور ہم نے اعتماد میں لیا اور دورہ مکمل ہونے کے بعد بھی ہمارا رابطہ ہو گا اور وہ ہمیں باخبر رکھیں گے۔ انہوں نے کہاکہ ہمارے تعلقات کی نوعیت ایسی ہے رشتہ ایسا ہے کہ ہم ہر موڑ پر ایک دوسرے کو اعتماد میں لیتے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ وزیر اعظم عمران خان کی چینی اعلیٰ قیادت سے ملاقات ہوئی ہے اور وزیر اعظم عمران خان کی صدر شی سے بھی ملاقات ہو گی۔ انہوں نے کہاکہ وزیر اعظم عمران خان کا تیرہ مہینوں میں چین کا تیسرا دورہ ہے ہماری خواہش ہے کہ جس طرح انہوں نے مہمان نوازی کی ہے انہیں بھی پاکستان آنے کی دعوت دی جائے۔ انہوں نے کہاکہ ہماری چین کے وزیر اعظم کے ساتھ دو ملاقات ہوئی ہے اور وفود کی سطح پر بھی مذاکرات ہوئے ہیں ان مذاکرات میں ہم نے تجارتی و اقتصادی تعاون کے فروغ اور سی پیک کے حوالے سے تفصیلی گفتگو کی ہے۔ انہوں نے کہاکہ ہم نے دو طرفہ اقتصادی تعاون کو کیسے آگے لے کر چلنا ہے اس پر بھی بات چیت ہوئی۔ انہوں نے کہاکہ بہت سی مفاہمتی یادداشتوں پر دستخط ہوئے۔ انہوں نے کہاکہ پانی کے مسئلے پر پر ایک ڈی سیلینیشن پلانٹ لگانے کا فیصلہ کیا گیا ہے گوادر بھی اس سے مستفید ہو گا۔ انہوں نے کہاکہ تعلیم کے شعبے میں ایم او یو پر دستخط کئے گئے ہیں،معذور افراد کی فلاح و بہود کیلئے بھی ایک دو طرفہ یادداشت پر دستخط کئے گئے ہیں،نارکاٹیکس کنٹرول کے حوالے سے بھی ایم و یو پر دستخط کئے گئے۔

شاہ محمودقریشی 

مزید :

صفحہ اول -