سابق صدر اور وزیر اعطم آزاد کمشیر سالار جمہوریت سردار سکندر حیات انتقال کرگئے

 سابق صدر اور وزیر اعطم آزاد کمشیر سالار جمہوریت سردار سکندر حیات انتقال ...

  

    کوٹلی،مظفرآباد، اسلام آباد(نیوز ایجنسیاں)سابق صدر اور وزیراعظم آزاد کشمیر سردار سکندر حیات خان انتقال کرگئے۔سردار سکندر حیات کے اہل خانہ نے ان کے انتقال کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا مرحوم عارضہ قلب کے باعث ہسپتال میں زیر علاج تھے۔سردار سکندر حیات خان کی عمر 87برس تھی۔ انکا انتقال اپنے آبائی علاقے کریلہ کوٹلی میں ہوا۔ سردار سکندر حیات خان آزاد کشمیر کے صدر اور 2 بار وزیراعظم رہے، کچھ عرصہ سے بیمار تھے،حالیہ ا نتخابات میں (ن) لیگ چھوڑکر مسلم کانفرنس میں شامل ہوئے تھے۔مرحوم آزاد کشمیر کے صدر اور طویل ترین وزیر اعظم رہے،انہیں سالار جمہوریت کہا جاتا ہے۔ سردار سکندر حیات کی ولادت 1جون 1934 کو ڈومال راجپوت ذات کے سردار فتح محمد خان کریلوی کے گھر میں ہوئی۔ دوسری طرف وفاقی وزیر اطلاعات چودھری فواد چودھری،وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید، چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی، ڈپٹی چیئرمین سینیٹ مرزا محمد آفریدی، سینیٹ میں قائد ایوان سینیٹر ڈاکٹر شہزاد وسیم، قائد حزب اختلاف سینیٹ سینیٹر سید یوسف رضا گیلانی اوردیگر سیاسی رہنماؤں نے  سابق صدر و وزیر اعظم آزاد کشمیر اور بزرگ سیاستدان سردار سکندر حیات خان کے انتقال پر دکھ کا اظہار کیا ہے۔انہوں نے کہا سردار سکندر حیات نے بطور وزیر اعظم اور صدر آزاد کشمیر جموں کشمیر کے حق اور بھارت کے ریاستی بربر یت کیخلاف آواز بلند کی۔ بزرگ سیاستدان نے ہمیشہ اصول پرستی اور حق کی سیاست کا علم بلند رکھا،کشمیر کیلئے ان کی خدمات کو ہمیشہ یاد رکھا جائیگا۔جبکہ صدر تحریک انصاف آ زاد کشمیر و سینئر موسٹ وزیر حکومت سردار تنویر الیاس خان نے کہا سینئر سیاستدان کی نا گہانی موت ایک عظیم سانحہ ہے جس سے پیدا ہونیوالا خلا صدیوں بعد بھی پر نہیں ہوسکے گا۔ سردار سکندر حیات خان کی ریاست اور عوام کیلئے خدمات ناقابل فرا مو ش ہیں،ان کی وفات سے ریاست ایک سائبان سے محروم ہو گئی۔ اللہ تعالیٰ مرحوم کی مغفرت اور درجات بلندفرمائے۔آمین  

سردار سکندر حیات

مزید :

صفحہ اول -