ملک خطرے میں ہے ، فی الفور نئے صوبے بنائیں ، سلامتی کیلئے کڑوے گھونٹ بھی پینے پڑیں گے: الطاف حسین

ملک خطرے میں ہے ، فی الفور نئے صوبے بنائیں ، سلامتی کیلئے کڑوے گھونٹ بھی پینے ...
ملک خطرے میں ہے ، فی الفور نئے صوبے بنائیں ، سلامتی کیلئے کڑوے گھونٹ بھی پینے پڑیں گے: الطاف حسین

  


لندن،کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) متحدہ قومی موومنٹ کے قائد الطاف حسین نے مطالبہ کہاہے کہ قومی مسائل پر اے پی سی بلانے کے ساتھ قومی وسائل کی منصفانہ تقسیم، تمام نسلی ولسانی اکائیوں میں احساس محرومی کے خاتمے اورسب کوبرابرکاپاکستانی ہونے کاعملاًاحساس دلانے کیلئے ملک میں فی الفورنئے صوبوں کاقیام عمل میں لایاجائے اورملک میں نئے انتظامی یونٹس کی تشکیل کیلئے ہنگامی بنیادوں پر آل پارٹیز کانفرنس منعقد کی جائے۔ایم کیوایم کی رابطہ کمیٹی پاکستان اورلندن کے مشترکہ اجلاس سے خطاب کرتے الطاف حسین نے کہاکہپاکستان کے تمام مکاتب فکر سے تعلق رکھنے والے اکابرین سے اپیل کی کہ وہ پاکستان کی بقاء وسلامتی اور ترقی وخوشحالی کیلئے اپنی اپنی ذمہ داریوں کااحساس کریں،ایسے وقت میں جبکہ پوری دنیا بشمول ترقی یافتہ ممالک اورویٹو پاور رکھنے والی بین الاقوامی طاقتیں بھی غیریقینی معاشی صورتحال ، بگڑتی ہوئی امن عامہ کی صورتحال ، غربت وافلاس کی جانب بڑھتے ہوئے قدم ، بے روزگاری کے عروج ، تعلیم وصحت کی ناقص کارکردگی کے ساتھ عسکری میدان میں بھی انتہائی غیریقینی کیفیت اور عدم استحکام کا شکار ہیں۔ دنیا کے ہرخطے پر تیسری جنگ عظیم کے آغاز کی گونج سنائی دے رہی ہے ،ایسی نازک صورتحال میں پاکستان جیسے غیرترقی یافتہ اور قرضوں میں جکڑے ملک کی سلامتی کے بارے میں ارباب اختیار کو تمام لسانی ،نسلی ،ثقافتی ،علاقائی، مسلک وعقیدے ودیگر تفرقات سے باہر نکل کر پاکستان کی دیرپا بقاء، سلامتی اور خوشحالی کیلئے حقیقت پسندانہ پالیساں بنانی ہوں گی اور یہ پالیسیاں بناتے ہوئے انہیں کڑوے گھونٹ پینے پڑیں توانہیں ملک کی سلامتی وبقاءکی خاطر یہ کڑوے گھونٹ بھی پینے پڑیں گے۔

مزید : قومی