شرمناک کاروبار کے الزام میں ایک اور بھارتی اداکارہ جیل پہنچ گئی

شرمناک کاروبار کے الزام میں ایک اور بھارتی اداکارہ جیل پہنچ گئی
شرمناک کاروبار کے الزام میں ایک اور بھارتی اداکارہ جیل پہنچ گئی

  


نیو دہلی (نیوز ڈیسک) بھارتی اداکاراﺅں کی جسم فروشی سے پردہ اٹھنا شروع ہوا ہے تو یہ سلسلہ کہیں رکتا نظر نہیں آتا اور چند روز قبل شویتا باسو کی گرفتاری کے بعد دیویا سری کو بھی جسم فروشی کے الزام میں گرفتار کر لیا گیا ہے۔ دیویا جنوبی ہند کی کناڈا فلموں کی مشہور ہیروئن ہیں اور اسے اس کے دوست پون کمار کے ساتھ گرفتار کیا گیا ہے۔ پون پر الزام ہے کہ وہ عصمت فروشی کا کاروبار چلاتا ہے جبکہ دیویا اس کاروبار کے بڑے بڑے گاہکوں کو جسم فروشی کی خدمات فراہم کرتی تھی۔ پچھلے ماہ فلمسازوں اوم پرکاش راﺅ، گرودیش پانڈے اور پروڈیوسروں دواکار بابو اور راجہ شیکھر کو بھی نوجوان لڑکیوں کو فلم میں کام دینے کے بدلے جسم فروشی پر مائل کرنے کے جرم میں گرفتار کیا جا چکا ہے۔ چند روز قبل ہی قومی ایوارڈ یافتہ اداکارہ شویتا باسو کو جسم فروشی کرتے ہوئے رنگے ہاتھوں گرفتار کیا گیا تھا۔

توقع طاہر کی جا رہی ہے کہ اس کی تفتیش کے دوران اس دھندے میں ملوث متعدد اور اداکاراﺅں کا پول کھول جائے گا۔ ہدائیت کار ایس ایم سوامی کا کہنا ہے کہ تلگو، تامل کناڈا اور ملایالم فلموں کی متعدد اداکارائیں اس وقت اس خوف میں مبتلا ہیں کہ شویتا تفتیش کے دوران ان کے رازوں سے پردہ اٹھا دے گی۔

مزید : ڈیلی بائیٹس