دوہری شہریت والے قادیانیوں کی پاکستانی شہریت ختم کی جائے،مفتی محمد خان

دوہری شہریت والے قادیانیوں کی پاکستانی شہریت ختم کی جائے،مفتی محمد خان

لاہور(پ ر)ملی مجلس شرعی پاکستان نے کہا ہے کہ عالمی استعماری اسلام دشمن قوتیں زرخرید ایجنسیوں کے ذریعے قادیانیوں کو غیر مسلم اقلیت قراردی جانے والی قرار داد کو ختم کرنے کیلئے پر تول رہی ہیں،7ستمبر کو یہود وہنود کے ایجنٹ جو اسلام اور پاکستان کے دشمن تھے انہیں غیر مسلم قرار دیا گیا، قادیانی اسلام اور پاکستان کے دشمن ہیں۔اسلام میں بگاڑ پیدا کرنے اور ملک کو توڑنے کیلئے یہود ونصاریٰ نے قادیانیوں کا فتنہ پیدا کیا تھا، مرزائیوں کو اقلیت قرار دینے میں ذوالفقار علی بھٹو کی خدمات کو بھی نظر انداز نہیں کیا جا سکتا حکومت قادیانیوں کی سرگرمیوں کی مانیٹرنگ کرے اور دوہری شہریت والے قادیانیوں کی پاکستانی شہریت کو ختم کیا جائے ان خیالات کااظہار گذشتہ روز ملی مجلس شرعی پاکستان کے صدر مفتی محمد خان قادری سیکرٹری جنرل پروفیسر ڈاکٹرمحمدامین جماعت اسلامی کے ڈاکٹر فرید احمد پراچہ،ڈاکٹر پروفیسر محمد امین،مرکزی جماعت اہلسنت کے علامہ عرفاان مشہدی،جے یو آئی(ف) کے مولانا امجد خان، (س)کے مولانا عبدالرب امجد ،مولانا امیر حمزہ،جامعۃ المنتظر کے علامہ نیاز نقوی،قاری خلیل الرحمن قادری ، مولانا راغب حسین نعیمی ،علامہ بابر فاروق رحیمی،ڈاکٹر میاں محمد اجمل قادری، مولانا شکیل الرحمن ناصر،تنظیم اسلام کے حافظ عاکف سعید،علامہ احمد علی قصوری ، سمیت دیگر نے سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

۔قادیانیوں کے فتنے کو ہمیشہ کیلئے ختم کرنے اور ملک کو دہشتگردی سے بچانے کیلئے ملک کی تمام مذہبی وسیاسی قوتیں یکجا ہوجائیں،7 ستمبر کا دن پاکستان کے اسلامی تشخص کا آئینہ دار ہے، جیسے پاکستان کی اساس ختم نبوت سے وابستہ ہے،ایسے پاکستان کی بقا ء بھی ختم نبوت سے ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4