سرکاری ہسپتالوں کی نجکاری کے خلاف چلڈرن ہسپتال کے ڈاکٹروں، نرسوں کا احتجاج

سرکاری ہسپتالوں کی نجکاری کے خلاف چلڈرن ہسپتال کے ڈاکٹروں، نرسوں کا احتجاج

لاہور (جنرل رپورٹر )پنجاب کے دس اضلاع میں سرکاری ہسپتالوں کو پرائیویٹ کرنے اور ٹھیکیداری نظام لانے کے خلاف چلڈرن ہسپتال کے ڈاکٹرز ، نرسز، پیرامیڈیکس نے مشترکہ احتجاج کیا۔ احتجاجی ریلی میں ینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشن کے صدر ڈاکٹر مسعود، ڈاکٹر ناصر، ڈاکٹر خذائمہ ، ڈاکٹر ساجد ، پیرامیڈیکس کے چیئر مین عاشق غوث، صدر انوار، آصف حسین، نواز غوری، حبیب ارشد، اقبال رحمت، رفیق، عمران اور سٹاف نرسز اُمتل و دیگر ملازمین نے شرکت کی۔ احتجاجی مظاہرین کا کہنا تھا کہ ہسپتالوں کو پرائیویٹائز کرنے سے غریب مریضوں کا علاج معالجہ بُری طرح سے متاثر ہو گا۔ اور ملازمین میں بھی بے چینی پائی جا رہی ہے کیونکہ ٹھیکیداری نظام سے محکمہ صحت بُری طرح سے فلاپ ہو جائے گا۔ کیونکہ ٹھیکیداری نظام کا مطلب ہے کہ ہسپتالوں کو بیچنا جو کہ ہم کسی بھی صورت میں ہونے نہیں دیں گے۔ مظاہرین نے وزیرِ اعلیٰ سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ وزیرِ اعلیٰ پنجاب صوبہ میں محکمہ صحت میں بہتری اور غریب مریضوں کے علاج معالجہ کے لیے خصوصی اقدامت کرنتے ہوئے ہسپتالوں کی پرائیویٹائزیشن بند کریں۔

مزید : صفحہ آخر