مہاجرین کی واپسی میں 3ماہ کی توسیع پر وزیراعظم ہاؤس کے گھیراؤکا اعلان

مہاجرین کی واپسی میں 3ماہ کی توسیع پر وزیراعظم ہاؤس کے گھیراؤکا اعلان

  

نوشہرہ(بیورورپورٹ) وفاقی حکومت کی طرف سے افغان مہاجرین کو مزید تین ماہ کی توسیع پرصوبہ خیبر پختونخوا کے عوام اور تاجر سراپا احتجاج وزیراعظم ہاوس کے گھیراو کا اعلان وفاقی حکومت کی طرف سے اعلان پر عوام اور تاجر وں کاغم وغصے کا اظہار مسلم لیگی امیدواروں کو آئندہ انتخابات میں ووٹ نہ دینے کا فیصلہ کیونکہ افغان مہاجرین کی وجہ سے خیبرپختونخوا معاشی طورپر مکمل تباہ ہوچکا ہے اور تاجر برادری دربدرکی ٹھوکریں کھانے پر مجبور کیونکہ افغان باشندوں نے تمام کاروبار پر قبضہ کررکھا ہے افغان مہاجرین کوکسی صورت مزید برداشت کرنے کو تیار نہیں ان خیالات کااظہار تنظیم تاجران خیبرپختونخوا کے سینئرنائب صدر آیاز پراچہ، انجمن شہریان کے صدر محمدریاض، سینئرسیٹنز ن کے صدر فریداللہ شاہ تنظیم تاجران ضلع نوشہرہ کے جنرل سیکرٹری سعیدبخش پراچہ، سیکرٹری اطلاعات راجہ سعید، فلاحی تنظیم خیبرپختونخوا کے صدر اجمل خان جلالی، تنظیم مزدور کے پی کے کے صدر انعام باغی نے احتجاجی اجلاس کے دوران کیا انہوں نے کہا کہ صوبے کے عوام انہی جانوں کا نذرانہ پیش کرتے ہوئے تھک گئے ہیں دوسری جانب پولیس اور سیکورٹی ادارے کے اہلکار ہزاروں کی تعداد میں جام شہادت نوش کرگئے ہیں دہشتگردی کی وجہ سے خیبرپختونخوا تباہ وبرباد ہوکر رہ گیا ہے ایسے حالات میں افغان مہاجرین کو مزید تین ماہ کی مہلت دینا ملک اور قوم کے ساتھ بڑا ظلم ہے نواز شریف اگر افغان حکومت اور ہندوستان حکومت کے اشارے ماننے کو تیار ہیں تو وہ مہربانی کرکے افغان مہاجرین کو اپنے صوبہ پنجاب میں منتقل کرے اور خصوصاً لاہور میں لاکھوں مہاجرین کو آباد کریں اور اگر وہ ایسا نہیں کرسکتے تو پھرانکی واپسی کا بندوبست کریں صوبہ خیبرپختونخوا کے عوام مزید ان لوگوں کو برداشت کرنے کو تیار نہیں صوبہ خیبرپختونخوا کے عوام نے وفاقی حکومت سے پرزور مطالبہ کیا کہ وہ 31دسمبر تک افغان مہاجرین کو افغانستان بھجوائیں ورنہ بصورت دیگر آنے والے انتخابات میں مسلم لیگ کو زبردست شکست سے دوچار کریں گے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -