ڈاہرانوالہ، 3ماہ سے واٹر سپلائی کی بندش، شہریوں کا سروں پر گھڑے اٹھا کر احتجاج

ڈاہرانوالہ، 3ماہ سے واٹر سپلائی کی بندش، شہریوں کا سروں پر گھڑے اٹھا کر ...

  

ڈاہرانوالہ(نامہ نگار)ڈاہرانوالہ اور اس سے ملحقہ آبادیوں رانا ٹاؤن،مدنیہ ٹاؤن،درس کالونی اور باجوہ کالونی کے مکین پینے کے پانی کی بوند بوند کو ترس گئے،عوام کے صبر کا پیمانہ لبریزہو گیا ۔تین ماہ سے واٹر سپلائی کے پانی کا ایک قطرہ بھی گھروں میں میسر نہیں۔گزشتہ روزملحقہ آبادیوں کے مکین احتجاج کرتے ہو ئے سڑکوں پر نکل آئے۔مظاہرین نے سروں پر گھٹرے ،واٹر کین اورہاتھوں میں احتجاجی بینر اورپلے کارڈ اٹھا رکھے تھے۔جن پر حلقہ کے ایم این اے چوہدری طاہر بشیر چیمہ اور ایم پی اے چوہدری زاہد اکرم کے خلاف شدید نعرے درج تھے۔مظاہرین نے احتجاجی ریلی نکالی اور کینال روڈ بلاک کر کے شدید نعرے بازی کی۔اس دوران مسلم لیگ (ن) کے مقامی کونسلر سلطان محمود رحمانی عرف پپو بھی عوام کا ساتھ دیتے ہوئے احتجاج میں شامل ہو گئے۔احتجاجی (بقیہ نمبر17صفحہ12پر )

مظاہرین نے الزام عائد کیا کہ ہماری واٹر سپلائی کا تمام سامان افسران کی ملی بھگت سے کسی اور حلقہ کی ٹربائن میں شفٹ کر دیا گیا ہے جو کہ یہاں کی عوام سے سراسر ناانصافی اور زیادتی ہے۔اس سے قبل واٹر سپلائی کا کھارہ پانی گھروں میں مہیا کیا جا رہا تھا جو کہ گھریلواستعمال کے لیے تو ٹھیک تھا لیکن پینے کے لیے مضر صحت تھا اب عوام کو اس سے بھی محروم کر دیا گیا ہے ۔چوہدری آصف حبیب نمبردار ،چوہدری طارق محمود واہلہ اور مسلم لیگ (ن) کے کونسلر سلطان محمود عرف پپونے احتجاج کرتے ہوئے وزیر اعلی پنجاب میاں محمد شہباز شریف سے پر زور مطالبہ کیا کہ ڈاہرانوالہ کی عوام پر رحم کیا جائے اور پینے کے صاف پانی کی فراہمی یقینی بنائی جائے۔عوام کی کثیر تعداد نے شکوہ کرتے ہوئے کہا کہ ضلع بہاولنگر کے دوسرے شہروں میں تو آئے روز جدید واٹر فلٹریشن پلانٹ لگائے جا رہے ہیں لیکن ڈاہرانوالہ کی غیور عوام کو مسلسل نظر انداز کیا جا رہاہے ۔یہاں حکومت کی طرف سے ایک بھی واٹر فلٹریشن پلانٹ نہیں لگایا گیا۔عوام کی کثیر تعداد نے وارننگ دی کہ اگر پینے کے صاف پانی کا بندو بست نہ کیا گیا تو ہم اپنے احتجاج کا دائرہ وسیع کرتے ہوئے ایم این اے اور ایم پی اے کے گھروں کے باہر احتجاجی دھرنا دیں گے۔

واٹر سپلائی بندش

مزید :

ملتان صفحہ آخر -