خوردنی تیل کی ملکی پیداوار 462ہزار ٹن ہوگئی ،3264 ہزار ٹن درآمد

خوردنی تیل کی ملکی پیداوار 462ہزار ٹن ہوگئی ،3264 ہزار ٹن درآمد

فیصل آباد(آن لائن) خوردنی تیل کی ملکی پیداوار 462ہزار ٹن ہے جبکہ ملکی ضروریات کو پورا کرنے کے لیے ہر سال 3264ہزار ٹن خوردنی تیل درآمد کیا جاتا ہے جس پر 2.85بلین روپے کا خرچ برداشت کرنا پڑتا ہے ۔خوردنی تیل کے حوالہ سے کینولا کاتیل اچھی کوالٹی اور اہمیت کا حامل ہے۔ کینولا کی کاشت منافع بخش ہے۔ حکومت پنجاب کاشتکاروں کو کینولا کی فی ایکڑ کاشت پر 5000روپے کی سبسڈی دے رہی ہے۔ آن لائن کے مطابق اس سلسلہ زرعی ماہرین کا کہناہے کہ کاشتکاروں کو چاہیے کہ وہ حکومت پنجاب کی طرف سے دی جانے والی سبسڈی سے فائدہ اٹھائیں اور کینولا کاشت کریں۔کاشتکار کینولا کی منظور شدہ اقسام کا 2 کلوگرام بیج فی ایکڑ استعمال کریں ۔ کینولا کی منظور شدہ اقسام کا بیج شعبہ تیلدار اجناس ایوب زرعی تحقیقاتی ادارہ فیصل آباد سے حاصل کیا جاسکتا ہے۔ کینولا کی کاشت بذریعہ پور یا ڈرل قطاروں میں کریں جبکہ قطاروں کا آپس میں فاصلہ ڈیڑھ فٹ رکھیں۔ کینولا کی کاشت کے لیے ایک بوری یوریا ، ایک بوری ڈی اے پی اور ایک بوری پوٹاشیم سلفیٹ کھاد فی ایکڑ استعمال کریں۔ آبپاش علاقوں میں ڈی اے پی اور پوٹاشیم سلفیٹ کی پوری مقدار بوائی کے وقت جبکہ یوریا کی آدھی مقدار پہلے پانی پر اور باقی مقدار پھول نکلتے وقت ڈالیں۔#/s#

مزید : کامرس