کشمیر میں مظالم ناقابل قبول ہیں دنیا کو انصاف کرنا ہوگا: جنرل زبیر حیات

کشمیر میں مظالم ناقابل قبول ہیں دنیا کو انصاف کرنا ہوگا: جنرل زبیر حیات

لندن(آن لائن) چیئرمین جوائنٹ چیف آف اسٹاف کمیٹی جنرل زبیر محمود حیات نے کہا ہے کہ کشمیر میں مظالم ناقابل قبول ہیں، دنیا کو کشمیر کے ساتھ انصاف کرنا ہوگا۔لندن میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے جنرل زبیر محمود حیات نے کہا ہے کہ نہتے اور بے گناہ کشمیریوں پر پیلیٹ گن کا استعمال کرکے بے جا خون بہایا جا رہا ہے، کشمیریوں پر ڈھائے جانے والے مظالم ناقابل قبول ہیں، دنیا کو کشمیر کے ساتھ انصاف کرنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر کے مسئلے پر آنکھیں بند نہیں کی جا سکتیں، بھارت کشمیر سے توجہ ہٹانے کیلیے ایل او سی پر جارحیت کر کے عام شہریوں کو نشانہ بنا رہا ہے جس کے ثبوت موجود ہیں۔چیئرمین جوائنٹ چیف آف اسٹاف کمیٹی نے اپنے خطاب میں پاک افغان تعلقات کے حوالے سے کہا کہ پرامن افغانستان پاکستان کے بہترین مفاد میں ہے،غیر ملکی فورسز کی تعیناتی سے افغانستان میں امن قائم نہیں ہو سکتا ہے، تاہم افغان مسئلہ مذاکرات کے ذریعے ہی ممکن ہے جنگ سے نہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ پاک فوج نے دہشت گردی کیخلاف سب سے بڑی جنگ لڑی ہے جس میں پاکستانی عوام نے بھرپور مدد کی۔ علاوہ ازیں سی پیک کے بارے میں جنرل زبیر محمود حیات نے واضح کیا کہ گوادر سے پاکستانی معیشت کو فائدہ ہورہا ہے تاہم پاکستان کو درپیش چیلنجز کا حل نکالیں گے۔تقریب میں برطانوی اراکین پارلیمنٹ ،،یورپی اراکین اور پاکستانیوں کی بڑی تعداد شریک تھی۔

مزید : صفحہ آخر