ایک ہفتے میں 10 سے زائد پولیس گردی کے واقعات سامنے آچکے، عظمیٰ بخاری

  ایک ہفتے میں 10 سے زائد پولیس گردی کے واقعات سامنے آچکے، عظمیٰ بخاری

  



لاہور (نمائندہ خصوصی) مسلم لیگ (ن) کی رہنما عظمیٰ بخاری نے آئی جی پنجاب سے مستعفی ہونے کا مطالبہ کردیا۔مسلم لیگ (ن) پنجاب کی ترجمان عظمیٰ بخاری نے کہا ہے کہ آئی جی پنجاب پولیس جیسے محکمہ چلانے کے مزید متحمل نہیں رہے۔ پنجاب پولیس بے گناہ شہریوں کیلئے جلاد کا روپ دھار چکی ہے۔ایک ہفتے کے دوران پنجاب میں دس سے زائد پولیس گردی کے واقعات سامنے آچکے ہیں۔ بابا فرید کے مزار پر پولیس نے پھر زائرین پر لاٹھی چارج کیا ہے۔زائرین پر لاٹھی چارج وی آئی پی شخصیت کو بہشتی دروازے سے داخل کرنے پر کیا گیا ہے۔ گزشتہ روز بھی نشے میں دھت ایس ایچ او نے بزرگ شہری کو تشدد کا نشانہ بنایا تھا۔مسلم لیگ (ن) پنجاب پولیس کے نازی ازم کی شدید مذمت کرتی ہے۔ وزیر اعظم نے پنجاب پولیس کو بھی شہریوں کیلئے نازی فورس بنادیا ہے۔ آئی جی پنجاب پاکستان کے سب سے بڑے صوبے میں امن و امان قائم رکھنے میں ناکام ہو گئے ہیں۔

آئی جی پنجاب کو اخلاقی طور پر خود ہی مستعفی ہو جانا چاہیے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...