پشاور، یوم عاشور کے موقع پر شہرسیل، افغان مہاجرین کے داخلے پر پابندی

پشاور، یوم عاشور کے موقع پر شہرسیل، افغان مہاجرین کے داخلے پر پابندی

پشاور) کرائم رپورٹر ( 9اور10ویں محرم الحرام کے سلسلے میں پشاورشہرکومکمل طور پرسیل کردیاگیاہے جبکہ افغان مہاجرین کی شہرمیں داخلے پرپابندی سمیت موبائل فون سروس معطل اور موٹرسائیکل پرڈبل سواری پرپابندی عائد کردی گئی ہے۔سکیورٹی کے پیش نظر اندرون شہر کے علاقوں خیبربازار،قصہ خوانی بازار،کوہاٹیگیٹ،جہانگیرپورہ،چوک ناصرخان،چوک یادگار،مینابازار،منڈابیری،تحصیل گورگھٹڑی،گلبہار،ہشتنگری،اشرف روڈ،سکندرپورہ،نشترآبادسمیت پشاورصدر،کالاباڑی،فوارہ چوک اوردیگرملحقہ علاقہ جات کو قناعتیں اور خاردارتاریں لگاکر سیل کردیاگیاہے اس دوران اہل تشیع اوررہائشی افرادکے علاوہ کسی بھی فردکو ان علاقوں میں داخل ہونے کی اجازت نہیں دی جارہی ہے جبکہ پیدل چلنے والوں کیلئے بھی چیکنگ پوائنٹس بنائے گئے ہیں اسی طرح جلوس کے تمام راستوں، ملحقہ عمارتوں اور مساجد پر سکیورٹی اہل کار تعینات کردئیے گئے ہیں،شہر میں دیگر علاقوں سے آنیوالے لوگوں کے سرائیوں اور ہوٹلز میں قیام پر پابندی لگادی گئی ہے اور افغان مہاجرین کو کیمپوں تک محدود کرنے کے علاوہ مقامی لوگوں کیلئے بھی شناختی کارڈ لازم قرار دیدیا گیا ہے شہر میں دسویں محرم کی رات تک موٹرسائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی اور صحافیوں اور اہل تشیع کے رضاکاروں کو بھی انٹری پاس جاری کردئیے گئے ہیں پولیس کے ساتھ ساتھ نیم فوجی اور فوجی دستے بھی شہر میں گشت کیلئے تعینات ہونگے جو قصہ خوانی میں قائم سپریم کمانڈ پوسٹ سے منسلک رہیں گے امام بارگاہوں کی انتظامیہ نے بھی سی سی ٹی وی کیمرے نصب کردئیے ہیں جو محرم کے بعد بھی سکیورٹی کیلئے نصب رہیں گے جبکہ جلوسوں کی فضائی نگرانی کیلئے ہیلی کاپٹرز اور ڈرون کیمروں کو استعمال کیا جائیگا شہر میں نویں محرم اور منگل 10محرم تک حساس علاقوں میں بازار اور دکانیں بند جبکہ دفاتر اور سکولوں میں بھی چھٹی کا اعلان کردیا گیا ہے۔

مزید : صفحہ اول


loading...