مقبوضہ کشمیر میں کشمیریوں کی نسل کشی کی جا رہی ہے، شاہ محمود قریشی کا بھارتی مظالم کی تحقیقات کیلئے کمیشن بنانے کا مطالبہ

مقبوضہ کشمیر میں کشمیریوں کی نسل کشی کی جا رہی ہے، شاہ محمود قریشی کا بھارتی ...
مقبوضہ کشمیر میں کشمیریوں کی نسل کشی کی جا رہی ہے، شاہ محمود قریشی کا بھارتی مظالم کی تحقیقات کیلئے کمیشن بنانے کا مطالبہ

  


جنیوا(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کی تحقیقات کیلئے کمیشن بنانے کا مطالبہ کردیا،وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ تحقیقات کیلئے آزاد اورخودمختارکمیشن بنایاجائے،کشمیریوں کی نسل کشی کی جارہی ہے،تفصیلات کے مطابق وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کونسل سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بھارت کشمیر سے توجہ ہٹانے کیلئے جعلی آپریشن کرسکتا ہے، انسانی حقوق کونسل میں کشمیریوں کامقدمہ لےکرآیا ہوں،بھارت مقبوضہ وادی میں غیرملکی مبصرین کوآنے کی اجازت دے،بھارت پیلٹ گنزکے استعمال کوروکے،فوری کرفیواٹھائے،تحقیقات کیلئے آزاد اور خودمختارکمیشن بنایاجائے۔

انہوں نے کہاکہ مقبوضہ کشمیر میں ادویات کی قلت ہے،بھارت نے مقبوضہ کشمیرکودنیا کی سب سے بڑی جیل بنادیا،بھارت نے 6ہفتے سے وادی کو محصور کررکھاہے،بھارت نے حریت قیادت کو 6ہفتے سے نظربندکررکھا ہے،شاہ محمود قریشی نے کہا کہ برطانوی میڈیانے بھی بھارتی بربریت کوبے نقاب کیا،بی بی سی رپورٹ میں کشمیری نے کہاتشددنہ کریں،گولی ماردیں،وزیر خارجہ نے کہا کہ بھارتی فورسز کشمیری نوجوانوں پربہیمانہ تشددکررہی ہیں،متنازعہ علاقے کے شہریوں کوتشددکانشانہ بنایاجارہاہے،بھارت مقبوضہ کشمیر سے دنیا کی توجہ ہٹانے کی کوشش کررہاہے،بھارت کشمیریوں کی اکثریت کواقلیت میں بدلناچاہتاہے،شاہ محمود قریشی نے کہا کہ مقبوضہ کشمیربھارت کااندرونی معاملہ نہیں،بھارت کادعویٰ غلط ہے کہ کشمیراس کااندرونی معاملہ ہے،بھارت عالمی قوانین کی خلاف ورزی کررہا ہے،کشمیریوں کوبغیرکسی وجہ گرفتارکیاجارہاہے،بھارت نے مذاکرات کی تمام پاکستانی پیشکش مستردکیں،انہوں نے کہا کہ بھارت کوعالمی قوانین کی خلاف ورزیوں سے فوری روکاجائے،کشمیرمیں قبرستان جیسی خاموشی ہے،وزیر خارجہ نے کہا کہ بھارت ایل اوسی پرشہری آبادی کومسلسل نشانہ بنارہاہے،مقبوضہ کشمیرمیں مظالم روانڈااورگجرات جیسے ہیں،بھارت کشمیر سے توجہ ہٹانے کیلئے جعلی آپریشن کرسکتاہے،انہوں نے کہا کہ انسانی حقوق کونسل میں کشمیریوں کامقدمہ لےکر آیاہوں، بھارت مقبوضہ وادی میں غیرملکی مبصرین کوآنے کی اجازت دے،بھارت پیلٹ گنزکے استعمال کوروکے،فوری کرفیواٹھائے،تحقیقات کیلئے آزاد اورخودمختارکمیشن بنایاجائے۔

مزید : اہم خبریں /قومی /بین الاقوامی /علاقائی /اسلام آباد


loading...