پارلیمنٹ میں بندوق رکھ کر قانون سازی کی جارہی ہے، سینیٹرر ضاربانی 

  پارلیمنٹ میں بندوق رکھ کر قانون سازی کی جارہی ہے، سینیٹرر ضاربانی 

  

کراچی(این این آئی)پاکستان پیپلزپارٹی کے مرکزی رہنماء سینیٹر رضا ربانی نے کہا ہے کہ پارلیمنٹ میں بندوق رکھ کر قانون سازی کی جارہی ہے۔حکومت ایسی قانون سازی کرنے جارہی ہے جس سے عوام کے بنیادی حقوق سلب ہورہے ہیں۔ سینیٹ اور قومی اسمبلی کوبے کار کرکے رکھ دیا گیا ہے۔ملک میں صدارتی نظام کیلئے پٹیشن د ائر کروائی گئی ہیں جو انتہائی خطرناک ہے۔پاکستان کے عوام فیصلہ کرچکے ہیں کہ یہاں صدارتی نظام نہیں چل سکتا ہے۔دوہری شخصیت کے حامل افراد کو ملک میں انتخابات لڑنے کی اجازت نہیں ہونی چاہیے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے سندھ اسمبلی کے کمیٹی روم میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پر پیپلزپارٹی کے رہنماء وقار مہدی اور راشد ربانی موجود تھے۔سینیٹر رضا ربانی نے کہا کہ پاکستان کی بنیاد فیڈرل ازم پر تھی۔قائداعظم نے بھی صوبوں کی مضبوطی کی بات کی۔پاکستان معرض وجود میں آنے کے بعد بانی پاکستان ہمارے درمیان نہیں رہے۔اور پھر بدقسمتی سے پاکستان نیشنل سیکورٹی اسٹیٹ بن گیااور تمام ترجیحات تبدیل ہوگئیں۔انہوں نے کہا کہ ملک میں صدارتی نظام کیلئے پٹیشن دائر کروائی گئی ہیں۔یہ خطرناک صورتحال ہے۔یہ ایک سیاسی فیصلہ ہے۔ پاکستان کے عوام کرچکے ہیں کہ ملک میں صدارتی نظام نہیں چل سکتا ہے۔ماضی میں آپ صدارتی نظام کو آزما چکے ہیں۔صدارتی نظام پاکستان میں ناکام ہوچکا ہے۔یہ فیصلہ عدالتوں کے ذریعے نہیں آسکتا ہے۔

رضا ربانی

مزید :

پشاورصفحہ آخر -