والدین بچوں کی تعلیم پر کوئی سمجھوتہ نہ کریں،راجہ راشد حفیظ

والدین بچوں کی تعلیم پر کوئی سمجھوتہ نہ کریں،راجہ راشد حفیظ

  

لاہور(لیڈی رپورٹر)گزشتہ روزپنجاب کے وزیر خواندگی و غیر رسمی بنیادی تعلیم راجہ راشد حفیظ نے صوبے کے عوام سے اپیل کی ہے کہ وہ ہر بچے کو بنیادی تعلیم کے زیور سے آراستہ کرنے کیلئے حکومت پنجاب کے مشن میں اس کا ساتھ دیں اور والدین کسی صورت اپنے بچوں کو ان کے اس بنیادی حق سے محروم نہ رکھیں۔ پنجاب حکومت خواندگی مشن کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کیلئے جو بے مثال کام کر رہی ہے۔

 اس کی کامیابی میں والدین کا کردار کلیدی حیثیت رکھتا ہے۔ انہوں نے ان خیالات کا اظہار گذشتہ روز عالمی یوم خواندگی کے حوالے سے منعقدہ ایک خصوصی تقریب سے مہمان خصوصی کی حیثیت سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ تقریب کا انعقاد لٹریسی ڈیپارٹمنٹ نے کیا تھا جس میں سیکریٹری لٹریسی سمیرا صمد سمیت دیگر متعلقہ حکام نے شرکت کی۔ راجہ راشد حفیظ نے کہا کہ پنجاب کی تاریخ میں پہلی مرتبہ لٹریسی کے حوالے سے وہ اقدامات کئے گئے جو گذشتہ پندرہ سالوں میں بھی نہیں ہوئے۔ انہو ں نے کہا کہ خواندہ معاشرہ ہی ترقی و خوشحالی کی بنیاد ہوتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم اس دین مبین کے پیروکار ہیں جس میں اللہ تعالی نے نبی کریم ﷺ پر پہلی وحی میں پڑھنے کا حکم نازل فرمایا۔ ہمارے علمائے کرام، مشائخ عظام، اساتذہ اور دینی، سیاسی و سماجی حلقوں سے تعلق رکھنے والے تمام باشعور لوگوں کی ذمہ داری ہے کہ وہ تعلیم کی ضرورت و اہمیت کو اجاگر کر کے تمام والدین کو اپنے بچوں کو تعلیم جیسا بنیادی حق دلوانے میں اپنا کردار ادا کریں۔ راجہ راشد حفیظ نے کہا کہ پنجاب حکومت نے لٹریسی کو نمائشی حیثیت سے نکال کر اسے اس کا اصل مقام دے دیا ہے اور غیر رسمی سکولوں میں ریگولر سکولوں کی طرح طلبہ کو تمام سہولیات کو یقینی بنایا گیا ہے۔ اساتذہ کی پیشہ ورانہ تربیت پر بھی پوری توجہ دی جا رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے جیلوں، بھٹوں، مدارس، دارالامان کے اداروں میں بھی غیر رسمی تعلیمی ادارے قائم کر دئیے ہیں جہاں سے بے شمار لوگ مستفید ہو چکے ہیں. تقریب سے سیکریٹری لٹریسی سمیرا صمد اور دیگر مقررین نے بھی خطاب کیا۔ دریں اثناء صوبائی وزیر راجہ راشد حفیظ نے لٹریسی ڈے کے حوالے سے بین الصوبائی وڈیو کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پنجاب حکومت نہ صرف پنجاب میں بلکہ دیگر صوبوں میں بھی لٹریسی کیلئے فعال کردار ادا کر رہی ہے. اس سلسلے میں میں خود سندھ اور بلوچستان کا دورہ کر چکا ہوں۔ انہوں نے شرح خواندگی کے مطلوبہ اہداف حاصل کرنے کیلئے بین الصوبائی تعاون اور رابطوں کی ضرورت و اہمیت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ تمام صوبے ایک دوسرے کے تجربات سے استفادہ کرکے اس جانب مثبت پیش رفت کر سکتے ہیں۔ انہو ں نے کہا کہ پنجاب حکومت نے لٹریسی کے شعبے میں جو بے مثال پیش رفت کی ہے ہم باقی صوبوں کو بھی اپنے ان تجربات سے استفادہ کرنے کی دعوت دیتے ہیں اور ان کے ساتھ مکمل تعاون کریں گے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -