رحیم یار خان: ذاتی دشمنی‘ کاروکاری پر رواں سال 71 افراد قتل 

رحیم یار خان: ذاتی دشمنی‘ کاروکاری پر رواں سال 71 افراد قتل 

  

 رحیم یارخان (نمائندہ پاکستان) ذاتی دشمنی، جھگڑے، مقدمہ بازی کی رنجش اور کاروکاری پر رواں سال کے 9 ماہ کے دوران ضلع بھر میں 71 افراد کو موت کے گھاٹ اتار دیا گیا، قتل ہونے والوں میں خواتین کی بڑی تعداد شامل ہے، ذرائع کے مطابق سال 2020ء (بقیہ نمبر43صفحہ 7پر)

کے پہلے نو ماہ کے دوران کاروکاری، ذاتی دشمنی، جھگڑوں اور مقدمہ بازی کی رنجش پر 71 افراد کو موت کے گھاٹ اتار دیا گیا، قتل ہونے والوں میں خواتین کی بڑی تعداد بھی شامل ہے۔ جنہیں تعلقات استوار کرنے کے شبہ پر شوہر، بھائیوں، باپ اور قریبی رشتہ داروں نے قتل کیا۔ ذرائع نے بتایا کہ قتل میں ملوث ملزمان کیخلاف پولیس کی جانب سے مقدمات کا اندراج کیا گیا تاہم وارداتوں میں ملوث زیادہ تر ملزمان پولیس کی گرفت سے بچ نکلنے میں کامیاب ہوکر روپوش ہوگئے۔ جنہیں گرفتار کرنے کیلئے پولیس کی کوششیں تاحال کامیاب نہ ہوپائی ہیں۔ جبکہ ان اندراج کئے جانیوالے قتل کے مقدمات کے زیادہ تر چالان بھی عدالتوں میں نامکمل پیش کئے گئے جس کے نتیجہ میں تاحال ان مقدمات کے فیصلے التواء کا شکار ہیں۔ 

قتل

مزید :

ملتان صفحہ آخر -