ڈیمز بھرنے کے باوجود پانی کی قلت ختم نہیں ہوئی،آفتاب صدیقی 

  ڈیمز بھرنے کے باوجود پانی کی قلت ختم نہیں ہوئی،آفتاب صدیقی 

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)پاکستان تحریک انصاف کے سینئررہنما و رکن قومی اسمبلی آفتاب صدیقی نے کہا کہ حالیہ بارشوں کے بعد شہر کے تمام ڈیمز مکمل بھر گئے ہیں مگر شہر میں پانی کی قلت ختم نہیں ہوئی۔مخصوص عناصر نے ذاتی مفاد کی خاطر شہر میں پانی کا مصنوعی بحران پیدا کیا ہوا ہے۔واٹر ٹینکر مافیا سمیت پانی کے مصنوعی بحران میں ملوث تمام عناصر کے خلاف کاروائی کی جائے۔ان خیالات کا اظہار آفتاب صدیقی نے انصاف ہاوس سے جاری بیان میں کیا۔انہوں نے مزید کہا کہ 70 فیصد کراچی میں پانی کا بحران ہے۔انتہائی حیرت انگیز بات ہے کہ سمندر کنارے بسا شہر پیاسا ہے۔شہری ہزاروں روپے خرچ کر کے ضرورت زندگی کے لیے پانی کا ٹینکر ڈلواتے ہیں۔آفتاب صدیقی نے کہا کہ کراچی واٹر بورڈ میں موجود کالی بھیڑیں ٹینکر مافیا کے ساتھ ملوث ہے۔حب ڈیم سے پانی ٹینکرز میں بھر کر شہر میں سپلائی کیے جاتے ہے۔کلفٹن،ڈیفنس،نارتھ کراچی،گلستان جوہر،گلشن اقبال،کورنگی سمیت دیگر علاقوں میں واٹر بورڈ کی لائنوں میں پانی نہیں آتا ہے۔انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت نے اس شہر کی بنیادیں ضرورتیں تک چھین لی ہیں۔سندھ حکومت واٹر ٹینکر مافیا کے خلاف کاروائی کرے اور واٹر بورڈ میں کرپٹ افسران کو فوری معطل کیا جائے جو مصنوعی بحران کا سبب بنے ہیں۔انہوں نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کے قیام کا بنیادی مقصد صرف قوم کو انصاف دلانا اور کرپٹ نظام کا خاتمہ ہے۔پی ٹی آئی شہریوں کے حق کے لیے تمام فورمز پر آوازبلند کرتی رہی ہے اور عوام کو انکے حقوق دلانے تک آواز بلند کرتی رہے گی۔

مزید :

صفحہ آخر -