کشمیری عوام کی قربانیاں ضرور رنگ لائیں گی ، عالمی برادری بھارتی مظالم کا نوٹس لے: شہباز شریف

کشمیری عوام کی قربانیاں ضرور رنگ لائیں گی ، عالمی برادری بھارتی مظالم کا ...

  

لاہور(سٹی رپورٹر) وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف نے مقبوضہ کشمیر میں نہتے کشمیری عوام پر بھارتی فوج کی فائرنگ کی شدید مذمت کی ہے۔ وزیراعلیٰ نے بھارتی فوج کی متشدد کارروائیوں کے نتیجے میں کشمیری نوجوانوں کی شہادت پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے شہداء کے لواحقین سے ہمدردی اور تعزیت کا اظہار کیا ہے۔ وزیراعلیٰ شہبازشریف نے کہا کہ بھارتی افواج نے مقبوضہ جموں و کشمیر میں نہتے کشمیری عوام پر ظلم و ستم کی انتہا کردی ہے ، عالمی برادری بھارتی افواج کے انسانیت سوز مظالم کا نوٹس لے۔ مقبوضہ کشمیر میں انسانی خون کی ارزانی پر عالمی برادری کی خاموشی کا کوئی اخلاقی جواز نہیں۔ عالمی برادری کو بھارت پر کشمیر میں آگ اور خون کا یہ کھیل فوری طور پر بند کرنے کیلئے دباؤ ڈالنا چاہیئے۔ دوسری طرف شہباز شریف نے کہا ہے کہ پاکستان مسلم لیگ (ن) کی حکومت ملک کو مسائل کے گرداب سے نکال کر ترقی کی راہ پر گامزن کرنے کے وعدے کی تکمیل کی جانب بڑھ رہی ہے اور ملک کو اندھیروں سے نکال کر روشنیوں میں لانے کیلئے ہر ممکن وسائل بروئے کار لائے جا رہے ہیں ۔ وزیراعظم محمد نواز شریف کی قیادت میں توانائی بحران کے خاتمے کیلئے بے مثال کام کیا جا رہا ہے ۔ پاکستان مسلم لیگ (ن) کی حکومت نے منصوبوں پر تیز رفتاری سے دن رات کام کرنے کا کلچر متعارف کرایا ہے اور توانائی کی کمی کے مسئلے پر قابو پانے کیلئے ملک بھر میں بجلی کے کارخانے تیزرفتاری سے مکمل کیے جا رہے ہیں ۔ توانائی منصوبوں کی تکمیل سے 2017ء کے اختتام تک ہزاروں میگا واٹ بجلی نیشنل گرڈ میں شامل ہو گی ۔وزیر اعلی محمد شہباز شریف نے ان خیالات کا اظہارپاکستان مسلم لیگ (ن) کے عہدیداروں کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ 2018ء کے عام انتخابات میں عوام کارکردگی کی بنیاد پر ووٹ دیں گے اورملک کی ترقی میں رکاوٹیں ڈالنے والوں کوایک بار پھر ناکامی کا سامنا کرنا پڑے گا۔دریں اثناء شہبازشریف سے انسپکٹر جنرل پولیس مشتاق احمد سکھیرانے الوداعی ملاقات کی۔ وزیراعلیٰ نے پنجاب پولیس کو بہترین فورس بنانے کیلئے تیزرفتاری سے اقدامات اورپیشہ وارانہ انداز میں فرائض کی ادائیگی پر آئی جی پولیس مشتاق سکھیراکو خراج تحسین پیش کیا اور ان کیلئے نیک خواہشات کا اظہار کیا۔

مزید :

صفحہ اول -