اے بی سی نظام کمپیوٹرائزڈ کرنے سے شفافیت یقینی بنانے میں بھی مدد ملے گی، وزیر مملکت

اے بی سی نظام کمپیوٹرائزڈ کرنے سے شفافیت یقینی بنانے میں بھی مدد ملے گی، ...

  

اسلام آباد (اے پی پی) وزیرمملکت برائے اطلاعات و نشریات و قومی ورثہ مریم اورنگزیب نے کہا ہے کہ آڈٹ بیورو آف سرکولیشن کے نظام کو کمپیوٹرائزڈ کرنے اور آٹومیشن کا نظام متعارف کرانے سے اخباری صنعت میں بہتری آنے کے ساتھ ساتھ شفافیت اور گڈگورننس یقینی بنانے میں بھی مدد ملے گی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ذرائع ابلاغ کی تنظیموں سمیت وفاقی اور صوبائی محکمہ اطلاعات کے افسر وں پر مشتمل مشاورتی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ آڈٹ بیورو آف سرکولیشن کی کمپیوٹرائزیشن اور آٹو میشن کا عمل تمام فریقین کے مفاد میں ہو گا۔ جدید ٹیکنالوجی کے ثمرات سے علاقائی اور مقامی اخبارات بھی فائدہ اٹھا سکیں گے۔ ۔ انہوں نے متعلقہ حکام کو ہدایت کی کہ اس حوالے سے پیش رفت سے تمام فریقین کو باخبر رکھا جائے تا کہ وہ آزمائشی پروگرام کے حوالے سے اپنی رائے کا اظہار کر سکیں۔ اس موقع پر فیصلہ کیا گیا کہ فریقین 10مئی 2017ء تک اپنی تجاویز سے آگاہ کریں گے تا کہ مشاورتی اجلاس 15مئی 2017ء کو یقینی بنایا جا سکے۔صحافتی تنظیموں نے وزارت اطلاعات و نشریات کی اس حوالے سے کاوشوں کو سراہتے ہوئے کہا کہ آڈٹ بیورو آف سرکولیشن کے نظام کو باقاعدہ اور باسہولت بنانے کے حوالے سے وزارت اطلاعات کی کوششیں مبارکباد کی مستحق ہیں۔ ۔ اجلاس میں وفاقی سیکرٹری اطلاعات و نشریات، پرنسپل انفارمیشن آفیسر، ڈی جی اے بی سی اور چاروں صوبائی محکمہ اطلاعات کے افسروں نے شرکت کی۔

اے بی سی

مزید :

صفحہ اول -