نظریہ باچا خان پر عمل پیرا ہو کر امن کا قیام ممکن ہے :ایمل ولی خان

نظریہ باچا خان پر عمل پیرا ہو کر امن کا قیام ممکن ہے :ایمل ولی خان

  

چارسدہ (بیورو رپورٹ)عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی جائنٹ سیکرٹری ایمل ولی خان نے کہا ہے کہ باچا خان کے سوچ اور نظریات کے ذریعے دنیا میں امن اور خوشحالی لائی جا سکتی ہے ۔ پنجاب ، سندھ اور بلو چستا ن کے لو گ ایک پلیٹ فارم پر متحد ہو چکے ہیں مگر پختون قوم آج تک مختلف گروپوں میں تقسیم ہیں جس کا خمیازہ آج بھگت رہے ہیں۔ وہ ملک آباد میں شبو خان کی طرف سے دئیے گئے استقبالیہ سے خطاب کر رہے تھے ۔ اس موقع پر اے این پی کے ضلعی جنرل سیکرٹری محمد احمد خان نے بھی خطاب کیا جبکہ اس موقع پر تحسین عبداللہ ، اے این پی تحصیل چارسدہ کے صدر عالمگیر خان ایڈوکیٹ، ظاہر شاہ عزیز خیل اور دیگر ذمہ داران بھی موجود تھے ۔ استقبالیہ میں شبو خان نے خاندان اور ساتھیوں سمیت پیپلز پارٹی سے مستعفی ہو کر عوامی نیشنل پارٹی میں باقاعدہ شمولیت کا اعلان کیا ۔ استقبالیہ تقریب سے خطاب کر تے ہوئے ایمل ولی خان نے کہاکہ با چا خان نے پختون قوم کو شغور دینے کے لئے تعلیمی ادارے کھول دئیے اور فلسفہ عدم تشدد کے ذریعے انگریز سامراج کو بر صغیر سے نکلنے پر مجبور کیا ۔انہوں نے کہاکہ قیام پاکستان کے بعد با چا خان اور اس کے ساتھیوں پر عرصہ دراز تنگ کیا گیا اور باچا خان سے لیکر اسفندیار ولی خان تک تمام پختون قیادت کو غدار ٹھہرایا گیا ۔انہوں نے کہاکہ اے این پی کی تاریخ قربانیوں سے بھری پڑی ہے اور گزشتہ سو سال سے باچا خان کے پیرو کار خون کی قربانیاں دے رہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ اس ملک کا المیہ یہ ہے کہ قومی دولت کو بے در دی سے لوٹنے والے بیرون ملک فرار ہو رہے ہیں اور واپس آکر پلی بارگینگ کرکے عوام کے سامنے مسیحا کے روپ میں پیش کئے جا تے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ وقت آگیا ہے کہ پختون قوم ایک پلیٹ فارم پر متحد ہو جائے کیونکہ سندھ ، بلو چستان اور پنجاب کے لوگ پہلے ہی ایک پلیٹ فارم پر متحد ہو چکے ہیں مگر بد قسمتی سے پختون قوم اسلام سمیت دیگر خوشنماء نعروں پر دھوکہ کھا رہی ہے ۔ تحریک انصاف پر تنقید کر تے ہوئے انہوں نے کہاکہ 90دن کے اندر تبدیلی کے دعویدار اب گدھوں کی تجارت تک محدود ہو گئے ۔ اے این پی نے پانچ سالہ دور حکومت میں قوم سے کئے گئے وعدے اور دعوے پورے کرکے پختون قوم کو شناخت ،وسائل پر اختیارکے ساتھ ساتھ ریکارڈ ترقیاتی منصوبے شروع کئے ۔ انہوں نے کہاکہ تحریک انصاف کا سورج غروب ہو رہا ہے جبکہ اسلام کے نام پر اسلام آباد والوں کی سیاست بھی ختم ہو رہی ہے ۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -