خیبرپختونخوا کے ایلیمنٹری اینڈ سیکنڈری ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ نے داخلہ مہم کا آغاز کر دیا

خیبرپختونخوا کے ایلیمنٹری اینڈ سیکنڈری ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ نے داخلہ مہم کا ...

  

پشاور (ایجوکیشن رپورٹر)خیبرپختونخوا کے ایلیمنٹری اینڈ سیکنڈری ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ (ESED) نے داخلہ مہم کا آغاز کر دیااس سلسلے میں رواں سال کے دوران نولاکھ بچوں کو کچی ؍ نرسری جماعتوں میں داخل کرنے کا ہدف مقرر کیا گیا ہے داخلہ مہم پورے صوبے میں سرکاری اسکولوں میں شروع کی گئی ہے جو 30 اپریل 2017 ء تک جاری رہے گی تاکہ گذشتہ سال کے آٹھ لاکھ بچوں کے داخلہ کے مقابلے میں رواں سال نو لاکھ بچوں کے سالانہ داخلہ کا ہدف حاصل کیا جا سکے۔ اس ضمن میں گذشتہ روز گورنمنٹ ہائیر سیکنڈری سکول حسنین شریف شہید سکول نمبر1 پشاور میں ایک افتتاحی تقریب منعقد ہوئی جس کے مہمانان خصوصی وزیر اعلیٰ خیبر پختونخواکے مشیر اشتیاق عمر اور ممبر صوبائی اسمبلی شوکت یوسفزئی تھے جبکہ سیکرٹری ای ایس ای ڈی ڈاکٹر شہزادخان بنگش، اسپیشل سیکرٹری ای ایس ای ڈی قیصر عالم اور ڈائریکٹر ای ایس ای ڈی رفیق خٹک بھی اس موقع پر موجود تھے۔ مشیروزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا اشتیاق عمرنے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تعلیم کا فروغ صوبائی حکومت کی اولین ترجیح ہے اور ہماری حکومت نے صوبے کے ہر بچے کی تعلیم تک رسائی ممکن بنانے کیلئے متعدد اقدامات کیے ہیں اور تعلیم و تدریس کا معیار بلند کرنے کیلئے کئی اصلاحات متعارف کرائی جا رہی ہیں۔ شوکت یوسفزئی نے اپنے خطاب میں ملکی ترقی کیلئے تعلیمی ترقی کو انتہائی اہم قرار دیتے ہوئے کہا کہ تعلیم خیبرپختونخوا حکومت کا میگا پراجیکٹ ہے کیونکہ ایک بہتر تعلیمی نظام ہی غربت میں کمی لانے میں معاون ہو سکتا ہے۔ صوبائی حکومت نے این ٹی ایس کے ذریعے خالصتاََ استحقاق اور میرٹ کی بنیاد پر شفاف طریقے سے چالیس ہزار سے زائد اساتذہ کو ملازمتیں فراہم کی ہیں جو کہ حکومت کی سنجیدگی کا ایک ثبوت ہے۔ اس موقع پر سیکرٹری ای ایس ای ڈی ڈاکٹر شہزاد بنگش نے کہا کہ ہماری تعلیمی اصلاحات کی بدولت پرائیویٹ اسکولوں کے چونتیس ہزار سے زائد طلباء سرکاری اسکولوں میں منتقل ہوئے ہیں۔ ہم تراسی ہزار اساتذہ کی برٹش کونسل کے ذریعے تربیت کر رہے ہیں جبکہ اکیس ارب روپے کی خطیر رقم سے اسکولوں میں غیر موجود سہولیات کی فراہمی ممکن بنا رہے ہیں۔ ہم نے آئی ایم یو اور آن لائن ایکشن مینجمنٹ سسٹم کے ذریعے اسکولوں میں اساتذہ کی حاضری یقینی بنانے کیلئے بھی اقدامات کیے ہیں۔ یہ داخلہ مہم صوبے کے تمام اضلاع میں 30اپریل2017تک جاری رہے گی۔ دیگر اضلاع میں بھی ایسی تقریبات کا انعقاد کیا جا رہا ہے۔ رواں سال نرسری جماعت میں نو لاکھ بچوں کے داخلے کا ہدف مقرر کیا گیا ہے گذشتہ سال یہ ہدف آٹھ لاکھ تھا جو سات لاکھ پچاسی ہزار بچوں کے داخلہ کیساتھ انتہائی کامیاب رہا۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -