سندھ اسمبلی :سولجربازار میں اسکول کا انہدام ،متحدہ قرارداد جمع کرادی

سندھ اسمبلی :سولجربازار میں اسکول کا انہدام ،متحدہ قرارداد جمع کرادی

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)ایم کیو ایم پاکستان نے سولجر بازار میں واقع تاریخی اسکول کے انہدام کے خلاف سندھ اسمبلی میں قرارداد جمع کرادی ہے ۔پیر کو سندھ اسمبلی میں ایم کیو ایم کے پارلیمانی لیڈر سید سردار احمد کی جانب سے جمع کرائی گئی قرارداد میں کہا گیا ہے کہ سولجربازارمیں واقع جفل ہرسٹ اسکول کو سندھ کلچرل ہیریٹج ایکٹ 194کے سیکشن 6کے تحت تحفظ حاصل ہے ۔مذکورہ اسکول 1931میں سیبل اے ابریو نامی خاتون نے اپنی ذاتی جائیداد پر تعمیر کرایا تھا ۔تاریخی اسکول سندھ کا تاریخی اور ثقافتی ورثہ ہے۔ہفتہ اور اتوار کی درمیانی شب لینڈ مافیا کے کارندوں نے قانون نافذ کرنے والے ادارے کے چند اہلکاروں کے ساتھ مل کر اسکول کی عمارت کو منہدم کردیا ۔اس موقع پر اسکول کے ہیڈ ماسٹر اور اہل علاقہ نے ان کو اس مذموم کارروائی سے باز رکھنے کی کوشش کی لیکن وہ شرپسندوں کو روکنے میں ناکام رہے ۔قرارداد میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ واقعہ میں ملوث ملزمان اور اور ان کے سہولت کار قانون نافذ کرنے والے ادارے کے اہلکاروں کو قرارواقعی سزا دیا جائے اور اسکول کی عمارت کو ازسرنوتعمیر کرکے اسے جلد از جلد ماڈل اسکول کی شکل دی جائے ۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -