سنکیانگ میں مسلمان خواتین کے برقع پہننے کی کوئی روایت ہی نہیں: چینی سفیر

سنکیانگ میں مسلمان خواتین کے برقع پہننے کی کوئی روایت ہی نہیں: چینی سفیر
سنکیانگ میں مسلمان خواتین کے برقع پہننے کی کوئی روایت ہی نہیں: چینی سفیر

  

اسلام آباد (ویب ڈیسک) پاکستان میں چین کے سفیر سن وی ڈونگ نے کہا ہے کہ سنکیانگ میں برقع پہننے پر پابندی اس لئے لگائی گئی کہ اس علاقے میں برقع پہننے کی کوئی روایت نہیں اور نہ ہی یہ لباس اس علاقے کی ثقافت سے لگائو کھاتا ہے۔

روزنامہ نوائے وقت کے مطابق چینی سفیر نے کہا کہ پاک چین اقتصادی راہداری منصوبے پر اطمینان بخش طور پر پیش رفت ہو رہی ہے۔ خطے کے کئی ممالک اس منصوبے میں شریک ہونا چاہتے ہیں۔ یہ منصوبہ سارے خطے کے مفاد میں ہے۔ چینی سفیر سے پوچھا گیا کہ چینی صدر شی جن پنگ کی امریکی صدر ٹرمپ سے ملاقات کو وہ کس طرح دیکھتے ہیں تو چینی سفیر نے کہا کہ یہ ملاقات بہت مثبت رہی ہے ان سے پوچھا گیا کہ امریکہ نے شام پر جو حملہ کیا ہے اس پر چین کا کیا ردعمل ہے کیا اس حملے سے چین اور امریکہ کے تعلقات میں کشیدگی ہو سکتی ہے تو چینی سفیر نے کہا کہ شام پر حملے سے چین امریکہ تعلقات کشیدہ ہونے کا امکان نہیں ہے۔ چین کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال کے خلاف ہے۔

شام میں مزیدکارروائی کاامکان ،داعش کوشکست دیناامریکا کی ترجیح ہے:ترجمان وائٹ ہاوس

 ہمارے خیال میں سیاسی مسائل کا حل سیاسی طور پر ہونا چاہئے۔ ان سے پوچھا گیا کہ چین کی بحریہ نے بھارت کی بحریہ سے مل کر بحری قذاقوں کے خلاف ایکشن لیا ہے تو چینی سفیر نے کہا کہ یہ مشترکہ ایکشن تھا لیکن زیادہ تر کردار چینی بحریہ کا تھا۔

مزید :

اسلام آباد -