چرچوں پر خود کش حملے، مصر میں 3 ماہ کیلئے ایمرجنسی نافذ کردی گئی

چرچوں پر خود کش حملے، مصر میں 3 ماہ کیلئے ایمرجنسی نافذ کردی گئی
چرچوں پر خود کش حملے، مصر میں 3 ماہ کیلئے ایمرجنسی نافذ کردی گئی

  

قاہرہ (ڈیلی پاکستان آن لائن) مصر نے عیسائیوں کی عبادت گاہوں پر ہونے والے خود کش حملوں کے بعد ملک میں تین ماہ کیلئے ایمرجنسی نافذ کردی۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق اتوار کے روز پام سنڈے کی تقریبات کے دوران مصر کے 2 چرچوں میں خود کش حملے کیے گئے تھے جن کے نتیجے میں کم از کم 45 افراد ہلاک ہو گئے تھے، ان حملوں کی ذمہ داری داعش نے قبول کی تھی ۔ چرچوں پر ہونے والے خود کش حملوں کے بعد مصری صدر عبدالفتاح السیسی نے اتوار کے روز ملک بھر میں تین ماہ کیلئے ایمرجنسی کے نفاذ کا اعلان کیا تھا تاہم اس فیصلے کی حتمی منظوری پارلیمنٹ نے دینی تھی۔ آج (منگل کو) مصری پارلیمنٹ نے صدر عبدالفتاح السیسی کے فیصلے کی توثیق کرتے ہوئے ملک بھر میں تین ماہ کیلئے ایمرجنسی کے نفاذ کی منظوری دے دی ہے۔

مزید :

عرب دنیا -اہم خبریں -