حکومت کا آئندہ بجٹ میں بینک ٹرانزیکشنزپر ’’ودہولڈنگ ٹیکس ‘‘ ختم کرنے کا فیصلہ

حکومت کا آئندہ بجٹ میں بینک ٹرانزیکشنزپر ’’ودہولڈنگ ٹیکس ‘‘ ختم کرنے کا ...

کراچی(این این آئی)بینکنگ شعبے سے نکل جانے والے کھربوں روپے واپس بینک ڈیپازٹس میں واپس لانے کیلئے آئندہ وفاقی بجٹ میں بینکنگ ٹرانزیکشنز پر ود ہولڈنگ ختم کرنے کا فیصلہ کر لیا ۔باخبر ذرائع کے مطابق وفاقی حکومت کے 5 سالہ معاشی روڈ میپ میں بتایا گیا ہے کہ مختلف وجوہات کی بنا پر بینکنگ سیکٹر سے باہر جانے والے کھربوں روپے واپس لانے کیلئے بینکنگ ٹرانزیکشنز پر ود ہولڈنگ ٹیکس ختم کیا جائیگا ۔ بینکوں کے پاس پڑے پیسہ پر ادا کیے جانے والے کم از کم منافع کو اس شرط پر برقرار رکھا جائے گا تاکہ بینک مختلف مراعاتی سکیموں کے تحت اپنے ڈیپازٹ بڑھا سکیں۔ سٹاک ایکسچینج میں سرمایہ کاری بڑھانے کیلئے نئی سکیمیں متعارف کروائی جائیں گی، ان میں پنشن فنڈ سکیم سر فہرست ہے جس میں کم از کم 10 لاکھ روپے کی سرمایہ کاری کی حد رکھی جائے گی، انشورنس کور کو بڑھانے کیلئے اسلامی انشورنس ماڈل(تکافل)کو فروغ دیا جائے گا ۔سودی بینکاری کے سبب بینکنگ سیکٹر سے نکالے جانے والے کھربوں روپے واپس بینکوں میں لانے کیلئے ملک میں اسلامی بینکاری کی برانچوں میں اضافہ کیا جائے گا ۔

’’ ود ہولڈنگ ٹیکس ‘‘

مزید : صفحہ اول