تجزیہ کار شہزاد اقبال نے عدلیہ کے حوالے سے خطرناک صورتحال کی نشاندہی کردی

تجزیہ کار شہزاد اقبال نے عدلیہ کے حوالے سے خطرناک صورتحال کی نشاندہی کردی
تجزیہ کار شہزاد اقبال نے عدلیہ کے حوالے سے خطرناک صورتحال کی نشاندہی کردی

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) تجزیہ کار شہزاد اقبال نے کہاہے کہ خطر ناک بات یہ ہے کہ جب پانامہ کیس پر فیصلہ آیا تو ن لیگ عدلیہ پر تنقید کررہی تھی اور اب ن لیگ کے حق میں فیصلے آرہے ہیں توتحریک انصاف والے فیصلوں پر تنقید کررہے ہیں۔

جیونیوز کے پروگرام ”رپورٹ کارڈ“ میں گفتگو کرتے ہوئے شہزاد اقبال نے کہا کہ حالات بدل رہے ہیں، نواز شریف ، شہباز شریف اورحمزہ شہباز کو بیل مل گئی ہے ،اس میں خطر ناک بات یہ ہے کہ جب پانامہ کیس پر فیصلہ آیا تو ن لیگ عدلیہ پر تنقید کررہی تھی اور اب یہ فیصلے آرہے ہیں توتحریک انصاف والے فیصلوں پر تنقید کررہے ہیں ، اس پر سیاسی جماعتوں کودیکھنے کی ضرورت ہے ، عدالتوں کو دیکھنا چاہئے کہ اس تاثر کوختم کرنے کیلئے کیا کرسکتی ہیں ؟ اس پر غور کرنے کی ضرورت ہے ۔

انہوں نے کہا کہ کرپشن ایک ایشو ہے لیکن عوام کی نظر میں یہ بڑا ایشو نہیں ہے ، لوگ سمجھتے ہیں کہ ان کے مسائل حل ہونے چاہئے ، ابھی تحریک انصاف جو بات کررہی ہے کہ ہمارے پاس نواز شریف کی منی لانڈرنگ کے ثبوت آگئے ہیں تو پہلے یہ بات واضح کی جائے کہ ثبوت حکومت کے پاس آئے ہیں یا نیب کے پاس آئے ہیں۔

مزید : قومی