غذائی تحفظ کیلئے کسانوں کی آمدنی میں اضافہ ضروری ہے:زرعی ماہرین

غذائی تحفظ کیلئے کسانوں کی آمدنی میں اضافہ ضروری ہے:زرعی ماہرین

  



سرگودھا (اے پی پی) زرعی ماہرین کاکہناہے کہ زراعت کا ملکی معیشت میںاہم کر دارہے ملک کی 45فیصد لیبرفور س زراعت کے شعبے سے وابستہ ہے۔ زرعی اجنا س کی پیداوار کے سلسلہ میں کسانو ں کا کر دار کلیدی حیثیت کا حامل ہے۔ غذائی تحفظ کیلئے اگر حکومتی سطح پر ایسے اقداما ت کے جا ئیں جن سے کسانو ں کی آمدنی میں اضافہ تو پاکستان غذائی اجناس میں مکمل طور پر خود کفیل ہو سکتا ہے۔ ا س کیلئے حکومتی سطح پر دیہی علاقوں کے کھیت کھیلایانوںمیں کسانو ں کی بہتر ی کیلئے تبدیلیاں لانا ہو ں گی۔اور کسانو ں کو زرعی مداخل سستے نر خوں فراہم کرنے کے ساتھ ا ن کو جدید زرعی ٹیکنالوجی سے استفا دہ کرنے کی طر ف سے بھی راغب کرنا ہو گا، کسانو ں کو دیگرممالک کی طرح معمولی ما ر ک ا پ پر زیاد ہ قرضے دینے سے پاکستان میں کسان خوشحال ہو گا کیونکہ تمام سہولیا ت میسرآنے سے و ہ زراعت اس سے منسلک شعبوں پر زیا د ہ تن دیہی سے توجہ دے سکے گا، پاکستان میں کسان زمین سے سونا نکالنے کے عمل کو بہتر سے بہتر بنا کر پاکستان کو زرعی اجنا س میں مکمل طور پر خود کفیل بنا سکے ۔

مزید : کامرس