آنکھ کے زخم ٹھیک کرنے کے گھریلو نسخے

آنکھ کے زخم ٹھیک کرنے کے گھریلو نسخے
آنکھ کے زخم ٹھیک کرنے کے گھریلو نسخے

  



لندن (نیوزڈیسک ) آنکھ قدرت کا ایک انمول تحفہ ہے، کیوں کہ اس کے بغیر زندگی کے تمام رنگ پھیکے ہیں۔ انسان کے لئے آنکھ جس قدر اہمیت کی حامل ہے، اسی قدر یہ جسم کا حساس ترین حصہ بھی ہے، جس کی حفاظت نہایت ضروری ہے۔ ایکسیڈینٹ یا ایسے کاموں کے دوران جن میں کیمیکل کا استعمال ہو آنکھ متاثر ہو سکتی ہے، یعنی آنکھوں پر زخم آ سکتا ہے، تو ایسی صورت حال کے لئے ہم آپ کو کچھ گھریلو ٹوٹکے بتا رہے ہیں، جن سے آپ آنکھ کے زخم کو پیچیدہ ہونے سے روک سکتے ہیں۔ کسی بھی حادثہ (ایکسیڈینٹ) کی صورت میں شیشے کے ٹکڑے آنکھ میں گھس جانا معمول کی بات ہے، تو ایسی صورت میں ڈاکٹر کے پاس فوری نہیں پہنچا جا سکتا تو آپ کو سمجھداری سے کام لینا ہوگا، کیوں کہ بداحتیاطی ہمیشہ کے لئے بینائی جانے کا باعث بھی بن سکتی ہے۔ حادثہ کی صورت میں آپ کو سب سے پہلے یہ دیکھنا ہے کہ زخم نے پپوٹے کو تو متاثر نہیں کیا، اگر ایسا نہیں ہوا تو زیادہ گھبرانے کی ضرورت نہیں، کیوں کہ اس کا مطلب ہے کہ آپ کی آنکھ کی گولی (ڈھیلا) محفوظ ہے۔ پپوٹے آنکھوں کی حفاظت کا قدرتی حصار ہوتے ہیں، جن کو عبور کرکے ہی گولی تک پہنچا جا سکتا ہے۔ دوسری صورت میں اگر پپوٹے پر بھی زخم لگ جائے تو فوری طور پر سن کرنے والی دوائی (anesthetic ) کے دو قطرے آنکھ میں ڈال لیں، اس سے آپ کو درد میں فوری آرام ملے گا اور زخم کا بہتر طور پر ادراک ہو سکے گا۔ اس کے علاوہ خون بہنے کی صورت میں آنکھ پر رومال باندھ لیں اور آنکھ کی گولی کو ادھر ادھر زیادہ مت گھمائیں بلکہ صرف سیدھا دیکھیں کیوں کہ اس سے زخم پیچیدہ ہو سکتا ہے۔ شیشے کے ٹکڑوں کے علاوہ آنکھ میں کسی کیمیکل کا چھینٹا پڑنا بھی ایک بڑی مصیبت ہوتا ہے۔ تو ایسی صورت میں سن کرنے والی دوائی (anesthetic ) کے دو قطرے آنکھ میں ڈالنے کے بعد تقریباً 10 منٹ تک آنکھوں کو تازہ پانی سے دھوئیں۔ آنکھ میں زخم لگنے کی صورت میں ان گھریلو ٹوٹکوں کو آزمانے کے باوجود اگر معاملہ زیادہ خراب ہونے لگے تو فوری ڈاکٹر سے رجوع کریں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس