توانائی بحران نے پورے ملک کو لپیٹ میں لے رکھا ہے: افتخار بشیر

توانائی بحران نے پورے ملک کو لپیٹ میں لے رکھا ہے: افتخار بشیر

  

لاہور(کامرس رپورٹر) صدر گرائنڈنگ ملز ایسوسی ایشن پاکستان چوہدری افتخار بشیرسابق ایگزیکٹو ممبر لاہور چیمبرآف کامرس نے کہا ہے کہ توانائی بحران نے صنعتی شعبے کے ساتھ ساتھ پورے ملک کو اپنی لپیٹ میں لیا ہوا ہے ۔اس لیے بجلی بحران کے خاتمہ کیلئے تمام دستیاب وسائل استعمال میں لائے جائیں اور سستی بجلی کے حصول کے لیے پنجاب میں 720میگا واٹ کا نیا ہائیڈرو پاور پراجیکٹ لگانے کا فیصلہ خوش آئند ہے توانائی بحران کے خاتمہ سے ہی حکومت کا صنعتی ترقی کا ویژن مکمل ہوگا ۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے گرائنڈنگ ملز ایسوسی ایشن کے عہدیداران کے ایک اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔افتخار بشیر نے کہا کہ ہائیڈل منصوبے سستی بجلی کے حصول کا آسان ذریعہ ہیں جولائی 2015میں واپڈا کے ذرائع کے مطابق ہائیڈل منصوبوں سے ساڑھے چار ارب یونٹ بجلی پیدا ہوئی ہے ہائیڈ ل بجلی کی پیداواری لاگت3روپے فی یونٹ سے زائد نہیں انہوں نے کہا کہ ہائیڈل منصوبوں میں کالا باغ ڈیم تعمیر نہ ہونے کی وجہ سے ملک میں سالانہ اربوں روپے کا نقصان ہورہا ہے چھوٹے ڈیم بنا کر پانی اور توانائی کے بحران کو کسی حد تک کم کیا جاسکتا ہے۔

مزید :

کامرس -