حکمران دہشتگردی کو را کی کارستانی قرار دیکر بری الذمہ نہیں ہوسکتے ‘ ابوالخیر زبیر

حکمران دہشتگردی کو را کی کارستانی قرار دیکر بری الذمہ نہیں ہوسکتے ‘ ...

  

ملتان (سٹی رپورٹر)جمعیت علماء پاکستان (نورانی)و ملی یکجہتی کونسل کے صدر ڈاکٹر صاحبزادہ ابوالخیر محمد زبیرنے کہا ہے کہ ملک کے حکمراں کوئٹہ جیسے دہشت گردی کے سنگین واقعات کوراء کی کارستانی قرار دے کربری الزماں نہیں ہوسکتے انہیں قوم کو جواب دینا ہے اس کے ثبوت اور شواہد موجود (بقیہ نمبر37صفحہ7پر )

ہونے کے باوجود راء کے سب سے بڑے ایجنٹ گلبھوشن یادیو کواب تک سزا کیوں نہیں دی گئی اور راء کے دیگر پاکستان کے شہری ایجنٹ اب تک گرفتار کیوں نہیں ہوئے اور انہیں کیفرکردار تک کیوں نہیں پہنچایاجاسکاکیا نوازشریف کے مودی سے دوستانہ تعلقات راء اور ان کے ایجنٹوں کے خلاف کارروائیوں کی راہ میں رکاؤٹ تونہیں ہیں؟ انہوں نے کہا کہ بلوچستان میں ایک عرصے سے صرف ایک مسلک کے لوگوں کے خلاف دھشت گردانہ کاروائیاں ملک میں فرقہ وارانہ فسادات کی ایک بڑی سازش ہیں ہم نے ملی یکجہتی کونسل کے پلیٹ فارم سے ملک کے مختلف حصوں میں جلسے ،کنونشن ،کانفرنسیں منعقد کر کے اور حال ہی میں APCکی بھرپور کوششیں کی ہیں اور مسلسل کررہے ہیں لیکن افسوس ہمارے حکمراں اپنا فرض ادا کرنے میں مکمل طور پر ناکام ہوگئے ہیں ۔

ابوالخیر زبیر

مزید :

ملتان صفحہ آخر -