وزارت داخلہ نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد کرانے میں ناکا م ہو گئی : اعتزاز احسن

وزارت داخلہ نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد کرانے میں ناکا م ہو گئی : اعتزاز احسن
وزارت داخلہ نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد کرانے میں ناکا م ہو گئی : اعتزاز احسن

  

کوئٹہ (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما اور قانون دان اعتزاز احسن نے کہا ہے کہ وزارت داخلہ نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد کرانے میں ناکام رہی ہے، تمام ایجنسیوں کی توجہ کوئٹہ اور بلوچستان پر ہونے کے باوجود چار روز بعد پھر کوئٹہ میں دھماکاہو گیا ۔

سانحہ کوئٹہ کے زخمیوں کی عیادت کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کوئٹہ میں ہونے والا خودکش دھماکہ انٹیلی جنس کی ناکامی ہے ، ہم سب نے ملکر نیشنل ایکشن پلان مرتب کیا تھا اورنیشنل ایکشن پلان کے تحت نیکٹا کو فعال ہونا تھا مگر اس پر تاحال عملدرآمد نہیں ہو سکا ۔ کوئٹہ میں آئے روز دھماکے ہو جانے کا مطلب یہی ہے کہ نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد نہیں ہو رہا ۔

والز نے 14اگست کے موقع پر بچوں کے ساتھ جشن آزادی کامزہ دوبالا کرنے کا طریقہ متعارف کروادیا، خبر پڑھنے کیلئے اس لنک پر کلک کریں

اعتزاز احسن نے مزید کہا کہ کوئٹہ میں تمام توجہ ہونے کے باوجود دہشت گردی ہور ہی ہے ، نیشنل ایکشن پلان کے بیس نکات تھے جن میں سے کسی پر بھی عملدرآمد نہیں ہوا ۔

پیپلز پارٹی کے رہنما نے کہا کہ وہ زخمیوں کی عیادت کے بعد سینئر وکلا ءسے ملے ہیں اور خودکش دھماکوں میں شہید اور زخمی ہونے والے افراد کے بچوں کی تعلیم اور دیگر بنیادی ضروریات کیلئے ایک ٹرسٹ بنانے کا مشورہ دیا ہے ۔

نیو یارک سے لاہور آنے والی پرواز سے پرندہ ٹکرا گیااور پھر۔ ۔ ۔ ۔ خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں

انہوں نے بتایا کہ اس ٹرسٹ کو رجسٹرکروایا جائے گا اور ایک اکاﺅنٹ بھی بنوایا جائے گا جس میں حکومتیں اور وکلاءرہنما اپناحصہ ڈال سکیں گے تاکہ شہداءاور زخمی افراد کے بچوں کی تعلیم کا بندوبست کیا جا سکے ۔

مزید :

کوئٹہ -