انڈونیشیا میں ہم جنس پرستوں کیلئے کوئی جگہ نہیں:صدارتی ترجمان

انڈونیشیا میں ہم جنس پرستوں کیلئے کوئی جگہ نہیں:صدارتی ترجمان
انڈونیشیا میں ہم جنس پرستوں کیلئے کوئی جگہ نہیں:صدارتی ترجمان

  

جکارتہ(مانیٹرنگ ڈیسک )دنیا بھر میں جہاں ہم جنس پرستوں کے حقوق کے نام پر بے راہ روی کو فروغ دیا جا رہا ہے وہاں مسلمان ممالک اپنی روایا ت کو بچانے اور خلاف مذہب کسی بھی قسم کے فیصلے کو قبول کرنے سے انکاری ہیں۔اس کی تازہ ترین مثا ل انڈونیشیا میں سامنے آئی ہے جہاں کے صدارتی ترجمان نے واضح کردیا ہے کہ ملک میں ہم جنس پرستوں کیلئے کوئی نرم گوشہ نہیں ہے۔

نوجوان کی اپنی ہی بیگم کے ساتھ شرمناک ترین حرکت جاننے کیلئے یہاں کلک کریں

ڈی ڈبلیو کے مطابق انڈونیشیا نے کہاہے کہ ملک میں ہم جنس پرست طبقے کیلئے کوئی جگہ نہیں ہے۔صدارتی ترجمان جوہان بودی نے بتایا کہ شہریوں کے حقوق مثلا تعلیم یا شناختی کارڈ حاصل کرنا وغیرہ تو محفوظ ہیں مگر ہم جنس پرستوںکی تحریک کے بڑھنے کیلئے کوئی جگہ نہیں۔ قبل ازیں اعلیٰ تعلیم کے ملکی وزیر یونیورسٹیوں میں ہم جنس پرستوں پر پابندی لگانے کا مطالبہ کر چکے ہیں جبکہ ملکی وزیر دفاع نے ہم جنس پرستوں کے حقوق کا دفاع کرنے والے گروپوں کو ’جنگ کے جدید طریقوں میں سے ایک‘ قرار دیا تھا۔

مزید :

بین الاقوامی -