35 سال تک مسلسل کوشش کے بعد بالآخر سعودی شہری باپ بن گیا، اتنے عرصے بعد کامیابی کیسے ملی؟ ایسا طریقہ بتادیا کہ سب کو حیران کردیا

35 سال تک مسلسل کوشش کے بعد بالآخر سعودی شہری باپ بن گیا، اتنے عرصے بعد ...
35 سال تک مسلسل کوشش کے بعد بالآخر سعودی شہری باپ بن گیا، اتنے عرصے بعد کامیابی کیسے ملی؟ ایسا طریقہ بتادیا کہ سب کو حیران کردیا

  

ریاض (مانیٹرنگ ڈیسک) اولاد سے محروم ایک سعودی شخص کی دعائیں قدرت نے سن لیں اور بالآخر تین شادیوں اور 35 سال کی کوششوں کے بعد اسے اولاد کی نعمت سے مالا مال کردیا۔

ویب سائٹ ایمریٹس 247 نے اخبار سبق کے حوالے سے بتایا ہے کہ دوبہ شہر سے تعلق رکھنے والے عبداللہ التقیقی کی شادی 21 سال کی عمر میں ہوئی۔ کئی سال کے انتظار کے بعد بھی ان کے ہاں اولاد نہ ہوئی تو انہوں نے پہلی بیوی کو طلاق دے دی۔ عبداللہ نے دوسری شادی کی لیکن مزید کئی سال بعد بھی اولاد نہ ہوئی جس پر دوسری بیوی کو بھی طلاق دے دی، اور پھر تیسری شادی کرلی۔ عبداللہ کا کہنا ہے کہ انہوں نے پہلی دونوں بیویوں کو اس لئے طلاق دی کہ وہ انہیں اولاد سے محروم نہیں رکھنا چاہتے تھے۔

تصویر دیکھ کر شادی کرنیوالے دولہا نے دلہن کوحقیقت میں دیکھتے ہی دوڑ لگا دی

انہوں نے بتایا کہ جب تیسری شادی کی تو اولاد کے لئے خصوصی دعا کو بھی اپنا معمول بنا لیا، اور پھر ان کے آنگن میں وہ پھول کھل گیا کہ جس کی بہار دیکھنے کے لئے وہ 35 سال سے منتظر تھے۔ عبداللہ نے بتایا کہ 56 سال کی عمر میں باپ بننے کی خوشی کو وہ بیان نہیں کرسکتے۔ ان کا کہنا تھا کہ وہ بانجھ تھے مگر دعاﺅں نے انہیں اولاد جیسی انمول نعمت سے مالا مال کردیا۔

مزید :

عرب دنیا -