قدرتی گیس کی فراہمی کے لئے ایران نے اپنے حصے کا کام مکمل کرلیا ،توانائی بحران سے نکلنے کے لئے پاکستان کو خود آگے آنا ہو گا :ایرانی نائب وزیر خارجہ

قدرتی گیس کی فراہمی کے لئے ایران نے اپنے حصے کا کام مکمل کرلیا ،توانائی بحران ...
قدرتی گیس کی فراہمی کے لئے ایران نے اپنے حصے کا کام مکمل کرلیا ،توانائی بحران سے نکلنے کے لئے پاکستان کو خود آگے آنا ہو گا :ایرانی نائب وزیر خارجہ

  

کراچی (نیوز ڈیسک) ابران کے نائب وزیر خارجہ ڈاکٹر کاظم سجاد پوری نے کہا ہے کہ پاکستان کو قدرتی گیس کی فراہمی کے لئے ایران نے اپنے حصے کا کام مکمل کرلیا ہے،اب یہ پاکستان کی ذمہ داری ہے کہ وہ سرزمین پاکستان میں گیس پائپ لائن بچھائے ،ہمارے پاس ایسی اطلاع ہے کہ منصوبے کو مکمل کرنے کے لئے چین سرمایہ کاری کے لئے تیار ہے۔

کراچی میں ’’پاکستان انسٹیٹیوٹ آف انٹر نیشنل افیئرز‘‘کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پاکستان کو توانائی کے بحران کا سامنا ہے،اس سے انکار نہیں کیا جاسکتا ہے،تاہم مسئلے کو حل کرنے کے لئے پاکستان کو خود آگے آنا ہوگا، ایران کے99 فیصد لوگ پاکستان سے محبت کرتے ہیں،اس کے برعکس اگر76 فیصد پاکستانی ایران کے حامی ہیں تو ہمیں سوچنا پڑے گا کہ کہیں یہ ہماری سفارت کاری کی ناکامی تو نہیں کہ24 فیصد پاکستانی ہم سے الگ تھلگ ہیں ۔انہوں نے کہا کہ یہ تاثر بھی درست نہیں ہے کہ ایران میں پاکستان کو امریکی ایجنٹ سمجھتے ہیں،بلکہ اصل صورتحال یہ ہے کہ پاکستانی ایک آزاد قوم ہیں جو اپنے فیصلے خود کرتے ہیں، عالمی طور پر یہ بات حوصلہ افزاء ہے کہ طاقت کا توازن اب امریکہ اور یورپ سے تبدیل ہوکر ایشیاء میں منتقل ہورہا ہے،جس کی واضح مثال چین کی ترقی کی صورتحال میں موجود ہے۔

انہوں نے کہا کہ یورپ سے برطانیہ کی علیحدگی کے بارے میں برطانوی عوام نے ریفرنڈم میں فیصلہ دیا ہے،اس سے بہت سے سوالات کھڑے ہوگئے ہیں اور یہ پیغام آیا ہے کہ انگلینڈ کے لوگ یورپ کے ساتھ رہنے میں خوش نہیں ہے ،یہ صورتحال عالمی دنیا کے بدلتے ہوئے حالات کی بھی نشاندہی کرتی ہے۔انہوں نے ایک سوال پر کہا کہ ایران فرقہ واریت کا کسی صورت قائل نہیں ہے،بلکہ امت مسلمہ کو متحد اور منظم دیکھنا چاہتا ہے۔ڈاکٹر کاظم سجاد پوری نے کہا کہ پاکستان ایران کے درمیان تجارت میں اضافہ دونوں ملکوں کے عوام کو زیادہ خوشحال بناسکتا ہے،اس سلسلے میں دونوں جانب سے تاجروں کے لئے ایک دوسرے ممالک میں ویزا کا حصول آسان ہونا چاہئیے، کسی بھی ملک یا قوم کی ترقی کے لئے سیاسی ومعاشی استحکام ضروری ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان اور ایران کے درمیان قائم برادرانہ رشتے کو وقت گزرنے کے ساتھ مزید بڑھنا چاہئے۔

مزید :

قومی -