سینیٹ، انتخابی اصلاحات سے متعلق بل ایوان میں پیش، بل کی منظوری سے الیکشن نئے قوانین کے تحت ہونگے: اسحٰق ڈار

سینیٹ، انتخابی اصلاحات سے متعلق بل ایوان میں پیش، بل کی منظوری سے الیکشن نئے ...

اسلام آباد (آن لائن) وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے انتخابی اصلاحات کے حوالے سے پارلیمانی کمیٹی کی رپورٹ ایوان بالا میں پیش کر دی۔ انہوں نے بتایاکہ انتظامی اصلاحات کیلئے 1مرکزی اور 2سب کمیٹیاں تشکیل دی گئیں۔ ان کمیٹیوں نے تمام پارلیمانی پارٹیوں کی آراء کے حصول کیلئے 129میٹنگز کیں۔ میٹنگز میں پارلیمانی پارٹیوں کی طرف سے دی جانے والی تجاویز اور آراء کوبل کا حصہ بنایا گیا۔ پارلیمانی پارٹیوں کے علاوہ ای سی پی ، نادرا، وزارت قانون و انصاف نے بھی تجاویز دیں جن کی روشنی میں بل کا مکمل ڈرافٹ تیار کیا گیا ہے۔ ویزر خزانہ نے بتایا کہ تمام سٹیک ہولڈرز کی آراء کی روشنی میں4000صفحات پر مشتمل 1200تجاویز سامنے آئی ہیں۔وزیر خزانہ اسحاق ڈار نے چیئر مین سینیٹ سے اپیل کی کہ چیف الیکشن کمشنر کی طرف سے ستمبر سے قبل انتخابی اصلاحات بل کی عدم موجودگی کی صورت الیکشن2018ء برائے قوانین کی روشنی میں کرانے کے عندیہ پر ہم نے بل کی تیاری میں دن رات ایک کیا لہٰذا اگلے 10دنوں میں قومی اسمبلی سے منظوری کے بعد اس ماہ کے آخر میں اگر ایوان بالا سے انتخابی اصلاحات بل کی منظوری ہو جاتی ہے تو الیکشن کمیشن کے پاس آئندہ انتخابات پرانے قوانین کے مطابق کرانے کاکوئی جواز نہیں ہو گا۔

انتخابی اصلاحات بل

مزید : صفحہ آخر