کراچی میں بینک ڈکیتیاں ،پولیس چیف کی زیر صدارت اجلاس

کراچی میں بینک ڈکیتیاں ،پولیس چیف کی زیر صدارت اجلاس

کراچی (کرائم رپورٹر)ایڈیشنل آئی جی کراچی غلام قادر تھیبونے کراچی پولیس آفس میں منعقدہ ایک اجلاس کے دوران بینک ڈکیتیوں، اسٹریٹ کرائمزاورپولیس کلنگز مقدمات کی تفتیش میں ابتک کی پولیس پیش رفت کا تفصیلی جائزہ لیا اور تمام ترآپریشنل وانویسٹی گیشن اقدامات کو مذید ٹھوس اور مربوط بنانیکے احکامات دیئے ۔اجلاس میں زونل ڈی آئی جیز،ڈی آئی جی سی آئی اے(CIA) ،ڈی آئی جی ایڈمن کراچی ایس ایس پیز انویسٹی گیشن، ایس آئی یو(SIU) بھی شریک تھے ۔ایڈیشنل آئی جی کراچی نے کہا کہ بینک ڈکیتیوں کے واقعات کی روک تھام اور ملوث ملزمان/گروہوں کی بیخ کنی کے لئے آپریشنل اور انویسٹی گیشن پولیس مشترکہ حکمت عملی اور لائحہ عمل کو ہر سطح پر نا صرف مؤثر بنائیں بلکہ معلومات کے حصول اور شیئرنگ کو بھی غیرمعمولی بنائیں تاکہ باقاعدہ نشاندہی کے تحت پولیس کے مجموعی اقدامات کو کامیاب اور نتیجہ خیز بنایا جاسکے ۔ انہوں نے کہا کہ پولیس زونز کی سطح پر قائم تمام سرکاری اور نجی بینکوں کے منتظمین سے روابط میں رہتے ہوئے انہیں بینک سیکیورٹی مینول پر عمل درآمدی اقدامات کاپابند بنایا جائے جبکہ تمام بینکوں کے پاس متعلقہ تھانوں، ایس ایچ اوزکے اور ایمرجینسی فون نمبرز کی فہرستوں کی موجودگی کو بھی یقینی بنایا جائے ۔انہوں نے دوران اجلاس اس بات پر زور دیا کہ بینک رابریز، اسٹریٹ کرائمزاورپولیس کلنگز کیسز کی ڈی ٹیکشن کے جملہ امور کو انتہائی سنجیدہ اور ترجیحی اقدامات کے تحت یقینی بنایا جائے اوراس سلسلے میں نا صرف پیشہ ورانہ صلاحیتوں،مہارت، تجربات بلکہ تمام تر تیکنیکس اور جدید آلات کے استعمال کو بھی بروئے کارلایا جائے ۔ایڈیشنل آئی جی کراچی نے کہا کہ حالیہ بینک رابریز کے واقعات میں ملوث ملزمان/گروہ سے ابتدائی تفتیش میں جو انکشافات سامنے آئے ہیں اس تناظر میں پولیس کی خصوصی ٹیموں کو ایسے جرائم کے خلاف ٹاسک دیئے جائیں اور ان ٹیموں کی سپرویژن تینوں زونز کی سطح پر ڈی آئی جی رینک کے افسر کو دی جائے تاکہ تمام تر انسدادی اقدامات کو مؤثر اور مربوط بناتے ہوئے پولیس کریک ڈاؤن کو ہر سطح پر کامیاب بنایا جاسکے ۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر