وہ جلیل القدر صحابی ؓ جنہیں جنّات نے اس ایک وجہ سے شہید کردیا،

وہ جلیل القدر صحابی ؓ جنہیں جنّات نے اس ایک وجہ سے شہید کردیا،
وہ جلیل القدر صحابی ؓ جنہیں جنّات نے اس ایک وجہ سے شہید کردیا،

  

لاہور(نظام الدولہ)جنات انسانی زندگیوں میں دخل اندازی کرتے ہیں اور یہ قرآن و سنت سے ثابت شدہ ہے۔جنات کی شرارتوں اور انکے مظالم کے حوالے سے بہت سے واقعات مشہور ہیں ۔حضرت سعد بن عبادہؓ جو شیر دل اکابر اَنصار میں شمار ہوتے بنو خزرج کے سردار تھے ان کے حوالے سے مختلف روایات مشہور ہیں کہ آپؓ کو جنات نے اس وقت شہیدکردیا تھا جب آپؓ ایک سوراخ میں پیشاب کررہے تھے ۔اس سوراخ میں جنات کا ٹھکانہ تھا ۔روایات میں آتا ہے کہ صحابہؓ نے ا س سوراخ سے آواز سنیں   ”ہم نے سعد کو قتل کردیاہے“۔ جنات نے اونچی اونچی آوازیں دیں اور شعر پڑھے جن کا مضمون یہ تھا ”ہم نے سعد بن عبادہؓ کو قتل کردیا اور ہم نے دو تیر پھینکے جو ا ن کے دل میں آرپار ہوگئے“

حضرت قتادہ ؓ فرماتے ہیں ” سعد بن عبادہؓ پیشاب کرنے کی کوشش میں کھڑے ہوئے ، پھر لوٹ کر کہنے لگے ، مجھے پشت میں کچھ تکلیف محسوس ہورہی ہے ، اور پھر چند لمحات بعد وفات پا گئے ۔اس وقت جنات نے بآواز بلند کہا :

”خزرج کے سردار سعد بن عبادہ کو ہم نے قتل کیا ہے ، انہیں دل پر دو تیر مارے ہیں ، اور نشانہ خطا نہیں ہوا“ بعض کتب میں ان واقعات کی صحت پر اعتراض اٹھائے گئے ہیں کہ ایساکوئی واقعہ نہیں ہوا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس