خواتین فنکاروں کو آئے روز جنسی ہراسگی کا سامنا ہوتا ہے : عما ئمہ ملک

خواتین فنکاروں کو آئے روز جنسی ہراسگی کا سامنا ہوتا ہے : عما ئمہ ملک

لاہور(فلم رپورٹر)اداکارہ و ماڈل عمائمہ ملک نے کہا ہے کہ ہماری کئی اداکارائیں، گلوکارائیں اور ماڈلز ایسی ہی جنسی ہراسگی کا سامنا آئے روز کرتی ہیں لیکن ان میں سے کوئی سامنے نہیں آتی۔ میں بھی اب تک خاموش تھی لیکن اب میں نے سوچا کہ مجھے لوگوں کو اس صورتحال سے آگاہ کرنا چاہیے۔ میں نے نشاط ہوٹل کی انتظامیہ (طلحہٰ اورعلی عمران ) کو اس حوالے سے متعدد شکایات کی لیکن انہوں نے کوئی پروا نہیں کی۔عمائمہ ملک نے ہوٹل میں موجود ایک شخص کی طرف سے ان کے نمبر پر کئے گئے تمام میسجز بھی شیئر کئے ہیں جس میں نامعلوم شخص نے بتایا کہ وہ اپنے برانڈ کی لانچنگ کے سلسلے میں ان سے ملاقات کرنا چاہتا جبکہ عمائمہ نے کوئی جواب نہ دیا لیکن اس کے باوجود مذکورہ شخص نے انہیں درجنوں میسج بھیجے۔تاہم اداکارہ نے پیغامات بھیجنے والے شخص کا نام نہیں بتایا اور نہ ہی ان کا بزنس کارڈ شیئر کیا۔اداکارہ کی جانب سے ٹوئیٹ کئے جانے کے بعد کئی افراد نے ان کے ساتھ پیش آنے والی واقعہ کی مذمت کی، تاہم کچھ افراد کا کہنا تھا کہ اگر اداکارہ کو ہراساں کئے جانے کے خلاف صحیح معنوں میں آواز اٹھانی ہے تو وہ اس شخص کا بزنس کارڈ بھی شیئر کریں۔یاد رہے کہ اداکارہ عمائمہ ملک نے دعویٰ کیا تھا کہ انہیں لاہور کے ایک ہوٹل میں قیام کے دوران وہاں موجود ایک مہمان نے ہراساں کرنے کی کوشش کی جب کہ ہوٹل انتظامیہ نے ان کی پرائیویسی کا کوئی خیال ہی نہیں کیا۔عمائمہ ملک نے سوشل میڈیا پربتایا ہے کہ میں لاہور کے نشاط ہوٹل میں ٹھہری تھی کہ عملے نے سب لوگوں کو میرے کمرے کے متعلق بتا دیا، جس کے بعد مختلف کاروباری افراد اور امیرمردوں کے وزٹنگ کارڈ میرے کمرے کے دروازے کے نیچے سے اندر سرکائے جانے لگے۔ہراساں کرنے کا الزام عمائمہ ملک کا کہنا تھا کہ اس سے پہلے بھی کئی ہوٹلوں میں میرے ساتھ یہ واقعہ پیش آ چکا ہے۔ کتنے ہی مردوں کے وزٹنگ کارڈ میرے روم کے دروازے کے نیچے سے اندر پھینکے گئے جنہیں میں جانتی ہی نہیں تھی۔ یہ صرف میرے ساتھ ہی پیش نہیں آتا۔عمائمہ ملک نے ہوٹل میں موجود ایک شخص کی طرف سے ان کے نمبر پر کئے گئے تمام میسجز بھی شیئر کئے ہیں جس میں نامعلوم شخص نے بتایا کہ وہ اپنے برانڈ کی لانچنگ کے سلسلے میں ان سے ملاقات کرنا چاہتا جبکہ عمائمہ نے کوئی جواب نہ دیا ۔

لیکن اس کے باوجود مذکورہ شخص نے انہیں درجنوں میسج بھیجے۔تاہم اداکارہ نے پیغامات بھیجنے والے شخص کا نام نہیں بتایا اور نہ ہی ان کا بزنس کارڈ شیئر کیا۔

مزید : کلچر