’’احتساب سب کیلئے پالیسی ‘‘ مستقبل میں بھی جاری رکھی جائیگی : چیئر مین نیب

’’احتساب سب کیلئے پالیسی ‘‘ مستقبل میں بھی جاری رکھی جائیگی : چیئر مین نیب

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)قومی احتساب بیورو (نیب) کے چیئرمین جسٹس (ر) جاوید اقبال نے کہا ہے کہ نیب کی انسداد بدعنوانی کی حکمت عملی ’’احتساب سب کیلئے‘‘ بہترین ہے جو مستقبل میں بھی جاری رکھی جائے گی۔ وہ جمعہ کو یہاں نیب ہیڈکوارٹرز میں موجودہ انتظامیہ کی جانب سے ادارے کی کارکردگی کو بہتر بنانے کے حوالے سے کئے گئے فیصلوں اور اقدامات پر عملدرآمد کی صورتحال کا جائزہ لینے کے لئے منعقدہ اجلاس کی صدارت کر رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ نیب پاکستان کو بدعنوانی سے پاک ملک بنانے کے لئے پرعزم ہے، اس کی انسداد بدعنوانی کی حکمت عملی ’’احتساب سب کیلئے‘‘ بہترین ثابت ہوئی ہے جو بلا امتیاز جاری رہے گی۔ انہوں نے کہا کہ تفتیشی افسران میرٹ پر شکایات کی تصدیق، انکوائریز اور انویسٹی گیشن کے لئے قانون، ایس او پیز اور ضابطہ اخلاق کی سختی سے پابندی کرتے ہیں۔ چیئرمین نیب نے کہا کہ نیب نے موثر حکمت عملی اختیار کرتے ہوئے وائٹ کالر جرائم کے مقدمات کو جلد نمٹانے کے لئے زیادہ سے زیادہ مدت دس ماہ مقرر کی ہے جو انسداد بدعنوانی کے دیگر اداروں کے مقابلے میں ایک ریکارڈ ہے۔

مزید : صفحہ اول