نیکی کبھی رائیگاں نہیں جاتی کیونکہ ۔۔۔۔

نیکی کبھی رائیگاں نہیں جاتی کیونکہ ۔۔۔۔
نیکی کبھی رائیگاں نہیں جاتی کیونکہ ۔۔۔۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

وہ ایک خستہ حال بیہوش عورت کو لیکر ہسپتال کی ایمرجینسی وارڈ میں داخل ہوا ، جسکے ساتھ دو نو عمر بچے تھے ،وہ بچے شکل و شباہت سے بھکاری لگ رہے تھے ۔ ڈاکٹر نے مریضہ کو دیکھا اور بولا ، اس بی بی کو ہارٹ اٹیک ہوا ہے ، اگر فوری امداد نہ دی گئی تو یہ مر جائیگی ،فوری علاج کیلئے خاصی رقم کی ضرورت ہے ،ڈاکٹر کی یہ بات  سنتے ہی بچوں نے چیخنا شروع کر دیا ، وہ شخص کبھی ڈاکٹر کو دیکھتا ، کبھی مریضہ کو اور کبھی بچوں کو ۔  کیا لگتی ہیں یہ آپ کی ؟  ڈاکٹر نے اس شخص کو تذبذب میں دیکھتے ہوئے پوچھا ۔کچھ نہیں ، میں ٹیکسی چلاتا ہوں ، اسے سڑک پہ لیٹے دیکھا ، اسکے پاس بیٹھے یہ دونوں بچے رو رہے تھے ،میں ہمدردی میں یہاں لے آیا ہوں،میری جیب میں  جو ہے ، دے دیتا ہوں ، اس نے جیب سے جمع پونجی نکال کر میز پر رکھ دی ، ڈاکٹر نے پیسوں کیطرف دیکھا اور مسکراتے ہوئے بولا ۔

" بابا جی ! یہ بہت تھوڑے پیسے ہیں ، ڈھیر سارے پیسے چاہئیں ،وہ بے بسی میں ادھر ادھر دیکھ رہا تھا ، کبھی آسمان کیطرف دیکھتا کبھی دیواروں کیطرف ، اچانک ایک چمک سی اسکے چہرے پر عیاں ہوئی ۔ ۔۔۔۔

۔۔۔ویڈیو دیکھیں۔۔۔

مزید : وڈیو گیلری