فیٹف بلز ملکی سلامتی کیلئے ضروری اپوزیشن کا ساتھ دینا لازم، شاہد خاقان 

  فیٹف بلز ملکی سلامتی کیلئے ضروری اپوزیشن کا ساتھ دینا لازم، شاہد خاقان 

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے فنانشل ایکشن ٹاسک فورس (ایف اے ٹی ایف) کے بلز کو ملکی سلامتی کیلئے ضروری قرار دیتے ہوئے کہا ہے قومی مفاد میں حکومت کی مدد کرنا پڑتی ہے۔دنیا نیوز کے پروگرام‘’آن دی فرنٹ ”میں گفتگو کرتے ہوئے انکاکہنا تھا حکومت کا نیب آرڈیننس ان کے اپنے لوگوں کیلئے این آر او تھا، ہم نے کہا نیب کا قانون پہلے ہی کالا، اسے مزید کرنا چا ہتے ہیں۔ ہم نے نیب قوانین کی ہر شق پر بات کی تھی۔ شہباز شریف صحتمند اور پارٹی کی قیادت کر رہے ہیں۔ مریم نواز کا اپنا ایک رول ہے، وہ سیاست میں رہے گا۔ مریم نواز پارلیمان کا حصہ نہیں ہیں ِ،وہ خود کہہ چکیں جب ضرورت پڑی عوام کے سامنے ہونگی۔ عمران خان کا مینڈ یٹ جعلی تھا، وہ ناکام ہو چکے، عوام ہمیں کہہ رہے ہیں حکومت سے جلد جان خلاصی کرائیں تاہم ہم کسی غیر جمہوری عمل کا حصہ بنیں گے، نہ کسی غیر آئینی کام میں ساتھ دیں گے۔مسئلہ کشمیر کو متنازع نہیں بنا نا چاہتے، اس پر کوئی اختلافی بیان نہیں دینگے، ریاست نے فیصلہ کر لیا تو سپور ٹ کریں گے۔ تاہم انہوں نے الزام عائد کیا کہ یہ پہلی حکومت ہے جس نے کشمیر معاملے کو متنازع کر دیا۔ این آر او ہوتا کیا ہے یہ وزیراعظم بتا دیں؟ ایسی باتیں تو معمولی سیاستدان بھی نہیں کرتا، وزیراعظم کریں گے تو ذہنی حالت کو دیکھنا چاہیے۔ اپوزیشن پارلیمان میں عوامی مسا ئل اجاگر کرتی ہے لیکن یہ پہلی حکومت ہے جو پارلیمنٹ کو چلنے نہیں دیتی۔ ہمیں مجبوراً پارلیمنٹ کے بجائے باہر آ کر پریس کانفرنس کرنا پڑتی ہے۔

شاہد خاقان

مزید :

صفحہ اول -